جمعرات , 19 ستمبر 2019

انقلابی اقدار اور قومی تشخص کے تحفظ میں فارسی زبان و ادب کے کردار پر رہبر انقلاب اسلامی کی تاکید

تہران (مانیٹرنگ ڈیسک)نواسۂ رسول کریم حضرت امام حسن علیہ السلام کی شب ولادت باسعادت کی مناسبت سے منعقدہ محفل میں فارسی زبان و ادب کے اساتذہ اور شعرائے کرام نے رہبر انقلاب اسلامی آیت اللہ العظمی سید علی خامنہ ای سے ملاقات کی۔

رہبر انقلاب اسلامی آیت اللہ العظمی سید علی خامنہ ای نے آسمان امامت و ولایت کے دوسرے درخشاں ستارے کریم اہلبیت حضرت امام حسن علیہ الصلوات و السلام کی شب ولادت باسعادت کی مناسبت سے فارسی زبان و ادب کے اساتذہ اور شعرائے کرام سے ہونے والی ملاقات میں خطاب کرتے ہوئے انقلابی اشعار کے جاری سلسلے اور ان میں ہونے والی پیشرفت کو امید افزا قرار دیا اور فرمایا کہ البتہ اشعار کے اور بھی زمینے پائے جاتے ہیں تاہم انقلابی تخیالات پر کہے جانے والے اشعار، مضمون اور جدت اور صیقل یافتہ الفاظ کے استعمال کے اعتبار سے نمایاں پیشرفت ہوئی ہے۔

رہبر انقلاب اسلامی نے رجحان و بیان شعر کو اعجاز آفرینش قرار دیا اور فرمایا کہ شعر کا حسن و جمال اسے بااثر اور فرض شناسی میں تبدیل کرتا ہے اور اس فرض شناسی کو ہدایت و رہنمائی میں بروئے کار لائے جانے کی ضرورت ہے۔

آیت اللہ العظمی سید علی خامنہ ای نے توحید کی معرفت، اہلبیت اطہار علیہ السلام کے فضائل و کمالات، انقلاب اور ملک کے اہم واقعات نیز عالم اسلام کے مختلف مسائل سے متعلق شعر گوئی کو اس کی رفعت و بلندی کا باعث قرار دیا اور فرمایا اشعار کی زیبائی میں سیلاب متاثرین کی امداد میں لوگوں کی فداکارانہ پرشکوہ موجودگی جیسے حسین کارنامے کو بھی منعکس کئے جانے کی ضرورت ہے اس لئے کہ یہ عمل آپ کے اشعار کو قومی تشخص کے پرچم میں تبدیل کرتا ہے۔

اس ملاقات میں رہبر انقلاب اسلامی کی موجودگی میں انتیس سینیئر وتجربے کار اور نوجوان شاعروں نے اپنے اشعار بھی پڑھ کر سنائے۔پیر کے روز مغرب و عشا کی نماز سے قبل بھی کچھ شعرائے کرام نے رہبر انقلاب اسلامی آیت اللہ العظمی سید علی خامنہ ای سے ملاقات کی اور اس نشست میں اپنے اشعار پڑھ کر سنائے۔

یہ بھی دیکھیں

ایرانی وزیر خارجہ کا یمن جنگ کو فوری طور پر بند کرنے کا مطالبہ

تہران (مانیٹرنگ ڈیسک)اسلامی جمہوریہ ایران کے وزیر خاجہ ڈاکٹر محمد جواد ظریف نے اپنے ٹویٹر …