جمعہ , 23 اگست 2019

ڈالر کی ذخیرہ اندوزی کرنے والےحرام کمائی کھا رہے ہیں، قبلہ ایاز

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک) چیئرمین اسلامی نظریاتی کونسل قبلہ ایاز نے کہا ڈالر ذخیرہ کرنا اور عوام کے مفاد کے خلاف کام کرنے کی اجازت شریعت نہیں دیتی، جو ڈالر کی ذخیرہ اندوزی کر رہے ہیں وہ حرام کمائی کھا رہے ہیں۔تفصیلات کے مطابق چیئرمین اسلامی نظریاتی کونسل قبلہ ایاز نے ملک میں ڈالرکے مصنوعی بحران اور روپے کی بے قدری کے حوالے سے کہا ڈالر کا ذخیرہ اس مقصد کے لیے کیا جائے کہ ملک کی معیشت کو نقصان ہو، یہ اسلامی اصولوں کے خلاف ہے، مفاد عامہ کے خلاف کسی کام کی شریعت اجازت نہیں دیتی، جو ڈالر کی ذخیرہ اندوزی کر رہے ہیں وہ حرام کمائی کھا رہے ہیں۔

چیئرمین اسلامی نظریاتی کونسل کا کہنا تھا ملکی مفادکونقصان پہنچانےوالوں پراللہ کاعذاب ہے، اسلام ذخیرہ اندوزی کی اجازت نہیں دیتا، ڈالر ذخیرہ کرنا،عوام کےمفادکےخلاف کام کرنےکی اجازت شریعت نہیں دیتی۔قبلہ ایاز نے کہا ہمیں بحیثیت قوم مل کر اس بحران کامقابلہ کرناہوگا، ملکی مفاداولین ترجیح ہونی چائیے، ملکی معیشت سےفائدہ پوری قوم کو ہوگا۔

گذشتہ روز ممتاز عالم دین مفتی تقی عثمانی نے ڈالر کی ذخیرہ اندوزی کے خلاف فتویٰ جاری کرتے ہوئے کہا تھا امریکی کرنسی مہنگا کر کے بیچنے کی نیت سے رکھنا شرعاً ناجائز ہے، ، یہ عمل ملک کے ساتھ بے وفائی اورذخیرہ اندوزی بھی ہے، جس پر ایک روایت میں لعنت آئی ہے۔انہوں نے دعا کی تھی کہ اللہ تعالی ہمیں اس گناہ اوراس کے برے نتائج سے محفوظ رکھیں اور کہا سب مل کرملک کومشکل صورتحال سےنکالیں۔

دوسری جانب علما کرام نے موجودہ صورتحال میں ڈالرز کی ذخیرہ اندوزی کو غلط اور خلاف قانون قرار دیا تھا، مذہبی اسکالر مفتی محمد زبیر کا کہنا ہے مسلمانوں کی مملکت کو نقصان پہنچانا صریحاً ناجائز اور قانون شکنی ہے۔

یہ بھی دیکھیں

ایران عالمی سطح پر ناقابل تسخیر طاقت میں تبدیل ہو جائے گا:میجرجنرل باقری

تہران (مانیٹرنگ ڈیسک)ایران کی مسلح افواج کے سربراہ جنرل محمد باقری نے کہا ہے ایران …