ہفتہ , 21 ستمبر 2019

عرب ممالک بحرین کی اقتصادی کانفرنس کا بائیکاٹ کریں: پی ایل او

مقبوضہ بیت المقدس (مانیٹرنگ ڈیسک)تنظیم آزادی فلسطین ‘پی ایل او’ نے خبردار کیا ہے کہ امریکا کی دعوت پر بحرین کی میزبانی میں ہونے والی عالمی اقتصادی کانفرنس قضیہ فلسطین کے تصفیے کی امریکی کوششوں کا حصہ ہے۔ عرب ممالک کا اس کانفرنس میں شرکت کرنا قضیہ فلسطین لیے انتہائی خطرناک ہوگا۔

پی ایل او کی طرف سے جاری کردہ ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ عرب ممالک بحرین میں ہونے والی عالمی اقتصادی کانگرنس کا بائیکاٹ کریں کیونکہ یہ کانفرنس صدی کی ڈیل کی امریکی سازش کا حصہ ہے اور اس کے قضیہ فلسطین کے مستقبل پر گہرے منفی اثرات مرتب ہوں گے۔

بیان میں مزید کہا گیا ہے کہ امریکا درحقیقت اسرائیل کو خطے میں اقتصادی، سیاسی اور فوجی اعتبار سے مضبوط بنانےکے لیے سرگرم ہے اور اسے فلسطینی قوم کے حقوق کے ساتھ کوئی تعلق نہیں۔بیان میں تمام عرب ممالک کے ساتھ ساتھ عرب ممالک کے اقتصادی اداروں پر زور دیا گیا ہے کہ وہ منامہ میں‌ ہونے والی عالمی اقتصادی کانفرنس کا بائیکاٹ کریں۔

خیال رہے کہ امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی دعوت پر 25 اور 26 جون کو بحرین کے دارالحکومت منامہ میں عالمی اقتصادی کانفرنس منعقد ہو رہی ہے۔ اس کانفرنس کا مقصد فلسطینی قوم کے بنیادی حقوق سلب کر کے انہیں بعض مالی مراعات کے ذریعے لبھانے کی کوشش کی جائے گی۔

یہ بھی دیکھیں

دشمن یمنی فوج کے انتباہ آمیز جواب سے سبق لیں اور یمن جنگ کو ختم کریں، صدر حسن روحانی

تہران (مانیٹرنگ ڈیسک)اسلامی جمہوریہ ایران کے صدر ڈاکٹر حسن روحانی نے کہا ہے کہ علاقے …