ہفتہ , 24 اگست 2019

ٹرمپ کی جنگ پسندانہ پالیسیوں پر برنی سینڈرز کی تنقید

واشنگٹن (مانیٹرنگ ڈیسک)امریکا میں دو ہزار بیس کے صدارتی انتخابات کے امیدوار برنی سینڈرز نے موجودہ امریکی صدر ٹرمپ کی جنگ پسندانہ پالیسیوں کی ایک بار پھر مخالفت کی ہے-امریکا میں صدارتی انتخابات کے امیدوار برنی سینڈرز نے سی این این سے اپنے انٹرویو میں کہا ہے کہ مغربی ایشیا میں جنگ و خونریزی پر کئی ٹریلین ڈالر خرچ ہو چکے ہیں جبکہ یہ رقم خود امریکا کے اندر ملک کی ترقی کے لئے خرچ ہونے چاہئے تھی-

انہوں نے کہا کہ ہم افغانستان کی جنگ میں مسلسل الجھے ہوئے ہیں اور عراق کی جنگ بھی ایک المیہ تھی- سینیئر امریکی سینیٹر اور دو ہزار بیس کے صدارتی الیکشن میں ڈیموکریٹک پارٹی کی جانب سے ابتدائی امیدوار برنی سینڈرز نے کہا کہ امریکی صدر کا یہ فرض نہیں بنتا کہ وہ سعودی عرب کی استبدادی، ڈکٹیٹر اور انسانوں کا خون بہانے والی حکومت کی حمایت کریں کیونکہ اس طرح کی حکومتیں امریکا کی دوست نہیں ہیں- انہوں نے ایران کے ساتھ کشیدگی پیدا کرنے والے ٹرمپ کے اقدامات کی بابت بھی خبردار کیا-واضح رہے کہ ٹرمپ سعودی حکومت کے اصل حامی ہیں اور انہوں نے کانگریس کی مخالفت کے باوجود سعودی عرب کو ہتھیاروں کی فروخت جاری رکھی-

یہ بھی دیکھیں

ظلم و تشدد کے شکار افراد سے اظہار یکجہتی کا پہلا عالمی دن آج منایا جارہا ہے

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک) بین الاقوامی برادری آج دنیا بھر میں مذہب اور عقیدے کی بنیاد …