منگل , 10 دسمبر 2019

امریکی صدر کا ایرانی سپریم لیڈر کے ساتھ جاپانی وزير اعظم کی ملاقات پر رد عمل

واشنگٹن (مانیٹرنگ ڈیسک)امریکی صدر ٹرمپ نےآیت اللہ سید علی خامنہ ای کے ساتھ جاپانی وزير اعظم کی ملاقات پر رد عمل ظاہر کیا ہے۔ذرائع کے مطابق امریکہ کے صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے ٹوئیٹر پر اپنے ایک بیان میں رہبر معظم انقلاب اسلامی آیت اللہ خامنہ ای کے ساتھ جاپان کے وزير اعظم کی حالیہ ملاقات کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ ایران کے روحانی پیشوا رہبر معظم انقلاب اسلامی کے ساتھ جاپان کے وزیر اعظم شینزو آبے کی ملاقات کو قابل قدر سمجھتا ہوں ، لیکن میں ذاتی طور پر امریکہ اور ایران کے درمیان کسی معاہدےکو ابھی بہت جلد سمجھتا ہوں ، حتی اس بارے میں سوچنا بھی ابھی جلد ہوگا۔ نہ وہ مذاکرات کے لئے آمادہ ہیں اور نہ ہم۔

رہبر معظم انقلاب اسلامی نے جاپان کے وزیر اعظم کے ساتھ ملاقات میں امریکہ کو جھوٹا اور ناقابل اعتماد ملک قراردیتے ہوئے فرمایا: ایٹمی مذاکرات کے تلخ تجربہ کے بعد امریکہ کو دوبارہ آزمانا درست نہیں ہے۔ ایران نے پانچ چھ سال تک امریکہ اور یورپی ممالک کے ساتھ مذاکرات کئے اور معاہدے تک بھی پہنچ گئے لیکن امریکہ نے معاہدہ توڑ دیا۔ کوئی بھی حریت پسند قوم اور عقلمند انسان دباؤ کے تحت مذاکرات کو پسند نہیں کرتا ۔

یہ بھی دیکھیں

ایران وعمان نے کی معاشی تعلقات کے فروغ پر تاکید

  ایران کے دورے پر آئے ہوئے علی بن مسعود السنیدی اتوار کے روزمحمد جواد …