جمعہ , 22 نومبر 2019

یمن کے مفرور صدرمنصور ہادی ریاض سے امریکہ فرار

صنعا(مانیٹرنگ ڈیسک)یمن کے مفرور اور مستعفی صدر منصور ہادی اپنے گھر والوں کے ہمراہ ریاض سے امریکا فرار کر گئے ہیں۔منصور ہادی نے سعودی بادشاہ ملک سلمان کو ایک خط لکھ کر گذشتہ پانچ برس کے دوران ان کی اور ان کی مفرور حکومت کی میزبانی کرنے ان کا شکریہ ادا کیاہے۔ خبروں میں کہا گیا ہے کہ یمن کے مفرور صدر منصور ہادی اپنی بیماری کا بہانہ بناکر سعودی عرب کے دارالحکومت ریاض امریکی ریاست اوہایو فرارکرگئے ہیں۔

عرب امریکا ویب سائٹ نے لکھا ہے کہ منصور ہادی نے یہ خط یمن کے لئے سعودی سفیر محمد سعید جابر کےذریعے شاہ سلمان کو پہنچایا۔ اس خط میں منصور ہادی نے لکھا ہے کہ وہ اپنی بیماری کی وجہ سے اب سیاسی اور حکومتی سرگرمیاں انجام نہیں دے سکتے ہیں۔ ادھر امریکی ریاست اوہایو بھی مختلف ذرائع کا کہنا ہے کہ یمن کے مفرور صدر منصورہادی ان کے ہمراہ لوگ وہاں پہنچ گئے ہیں۔ منصور ہادی کے علاوہ ان کے قریبی ساتھی بھی اپنے گھروالوں کے ہمراہ امریکی ریاست اوہایو پہنچے ہیں۔

منصورہادی نے بائیس جنوری دوہزار پندرہ کو یمنی وزیراعظم خالد بحاح کی کابینہ کے استعفے کے بعد اپنے عہدے سے استعفا دے کر صنعا سے جنوبی شہر عدن اور اس کے بعد اپنی مستعفی کابینہ کے ارکان کے ہمراہ عدن سے ریاض فرار کرگئے تھے۔

یہ بھی دیکھیں

روس کا سعودی عرب میں امریکی فوجیوں کے تعینات ہونے پر انتباہ

ماسکو: روس کے نائب وزیر خارجہ بوگدانوف نے سعودی عرب میں امریکی فوجیوں کے تعینات …