پیر , 19 اگست 2019
تازہ ترین

ایران کے ساتھ طے پایا جوہری معاہدہ بچانے کا اب بھی وقت ہے، برطانوی وزیرخارجہ

غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق برطانوی وزیر خارجہ جیریمی ہنٹ نے کہا کہ اگر ایران جوہری بم تیار کرتا ہے تو اس کے پاس اس کے لیے ایک سال سے کم وقت بچا ہے مگر جوہری معاہدے کو بچانے کا موقع ہاتھ سے نکلا جارہا ہے۔

جیریمی ہنٹ نے کہا کہ برطانیہ امریکا کا سب سے اہم اتحادی ہے مگر ایران کے حوالے سے امریکی پالیسی کے ساتھ ہمیں اتفاق نہیں ہے۔

برطانوی وزیر خارجہ نے کہا کہ اگر ایران جوہری معاہدے کی خلاف ورزی کرتا ہے تو اسے روکنے کی کوشش کی جائے گی، اس حوالے سے جلد ہی یورپی ملکوں کا اجلاس ہوگا، یورپی ممالک ایک مشترکہ کمیٹی قائم کریں گے جو جوہری معاہدہ بچانے کے لیے لائحہ عمل طے کرے گی۔

دوسری جانب فرانسیسی وزیر خارجہ جان ویف لوڈریان نے کہا ہے کہ ایران کے ساتھ طے پائے جوہری سمجھوتے کو بچانے کے لیے یورپی ملکوں کو ایک صفحے پر آنا ہوگا، ایران کو جوہری معاہدے کی بعض اہم شرائط معطل کرنے کا فیصلہ واپس لینا ہوگا۔

یاد رہے کہ یورپی یونین آج برسلز میں ہونے والے اجلاس میں ایران کے ساتھ طے پائے جوہری معاہدے کو بچانے پر غور کریں گے، اس کے علاوہ اجلاس میں خلیجی پانیوں میں عالمی تیل بردار جہازوں پر حملوں اور امریکا اور ایران کے درمیان جاری کشیدگی پر بھی غور کیا جائے گا۔

یہ بھی دیکھیں

کشمیر میں بھارتی جارحیت کی وجہ سے عوام کی زندگی اجیرن ہوگئی: ایمنسٹی انٹرنیشنل

لندن (مانیٹرنگ ڈیسک)ایمنسٹی انٹرنیشنل نے ہندوستان کے زیر انتظام کشمیر کی صورتحال پر شدید تشویش …