جمعرات , 22 اگست 2019

ایٹمی معاہدے کی حفاظت پر موگرینی کی تاکید

یورپی یونین کے شعبہ خارجہ پالیسی کی سربراہ فیڈریکا موگرینی نے یورپی پارلیمان میں تقریرکرتے ہوئے کہا کہ ایٹمی معاہدے کا تحفظ ہرچیز سے زیادہ یورپ کی سیکورٹی اور دنیا کی سلامتی کے لئے اہم ہے کیونکہ خلیج فارس کے علاقے میں بدامنی اور عدم استحکام سے یورپ بھی متاثر ہوگا۔ ان کا کہنا تھا کہ آج وہ لوگ بھی جو ایران کے ساتھ ہونے والے ایٹمی معاہدے کے بارے میں کافی بدظن تھے اس نتیجے پر پہنچ گئے ہیں کہ اس معاہدے کے بغیر حالات پہلے سے بھی زیادہ بدتر ہوجائیں گے۔ انہوں نے کہا کہ اسی لئے ایٹمی معاہدے سے امریکہ کے نکلنے کے بعد سے یورپ نے اس معاہدے کو باقی رکھنے کے لئے ہر ممکن کوشش کی ہے۔  فیڈریکا موگرینی نے ایٹمی معاہدے کے دائرے میں اپنے بعض وعدوں پر عمل در آمد کو معطل کردینے کے ایران کے تازہ اقدامات کا ذکرکرتے ہوئے کہا کہ یورپی یونین نے امریکہ کی یکطرفہ پابندیوں کے منفی اثرات کو کم کرنے کے لئے اپنی کوششیں تیز کردی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ایٹمی معاہدہ دوطرفہ یا چند جانبہ نہیں ہے بلکہ اس کی اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل نے توثیق کی ہے اور اس لئے اس کی حفاظت کی ذمہ داری پوری دنیا پر عائد ہوتی ہے۔

 

یہ بھی دیکھیں

کوپن ہیگن کے شدید ردعمل کے بعد ٹرمپ نے اپنا دورہ ڈنمارک ملتوی کردیا

کوپن ہیگن (مانیٹرنگ ڈیسک)جزیرہ گرین لینڈ کی خریداری سے متعلق امریکی صدر کی تجویز پر …