پیر , 9 دسمبر 2019

مزاحمت ہی صیہونی حکومت کے جرائم کے مقابلے کا واحد ذریعہ ہے:سید حسن نصر اللہ

بیروت (مانیٹرنگ ڈیسک)حزب اللہ لبنان کے سربراہ نے کہا ہے کہ تحریک مزاحمت کی پوزیشن بہت مضبوط ہے جس کے نتیجے میں مغربی ایشیا میں امریکہ و اسرائیل کی دشمنانہ پالیسیاں کبھی کامیاب نہیں ہوں گی۔ حزب اللہ لبنان کے سربراہ سید حسن نصراللہ نے بین الاقوامی امور میں ایرانی پارلیمنٹ کے اسپیکر کے معاون خصوصی حسین امیر عبداللہیان سے گفتگو میں علاقے میں امن و سلامتی کے عمل کو مستحکم بنانے میں ایران کی مدد و تعاون سے متعلق رہبر انقلاب اسلامی آیت اللہ العظمی سید علی خامنہ ای اور ایران کی حکومت و قوم کی حمایت کی قدردانی کرتے ہوئے کہا کہ جیساکہ رہبر انقلاب اسلامی نے فرمایا ہے، امریکہ ایران پر جنگ مسلط کرنے پر قادر نہیں ہے۔

انھوں نے کہا کہ وائٹ ہاؤس جانتا ہے کہ ایران پر اگر کوئی جنگ مسلط کی گئی تو پورا علاقہ لپیٹ میں آجائے گا اور پھر جنگ کا اختتام امریکہ کے ہاتھ میں نہیں ہو گا۔سید حسن نصراللہ نے مسئلہ فلسطین کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ مزاحمت ہی صیہونی حکومت کے جرائم کے مقابلے کا واحد ذریعہ ہے۔انھوں نے کہا کہ سینچری ڈیل منصوبہ بھی ہرگز کامیاب نہیں ہو گا۔

یہ بھی دیکھیں

ایران وعمان نے کی معاشی تعلقات کے فروغ پر تاکید

  ایران کے دورے پر آئے ہوئے علی بن مسعود السنیدی اتوار کے روزمحمد جواد …