جمعہ , 18 اکتوبر 2019

بیت المقدس میں فلسطینیوں کے گھروں کی مسماری انسانیت کے خلاف جرم ہے:قطر

دوحہ (مانیٹرنگ ڈیسک)قطرنے مقبوضہ بیت المقدس کے نواحی علاقے صور باھر میں وادی الحمص کے مقام پر اسرائیلی فوج کی طرف سے فلسطینیوں کےگھروں کی مسماری کی کارروائی کی شدید مذمت کرتے ہوئے اسے فلسطینی تاریخ کا بدترین ظلم اور انسانیت کے خلاف جرم قرار دیا ہے۔ قطر کا کہنا ہے کہ بیت المقدس میں فلسطینیوں کے گھروں کی مسماری اس بات کو ظاہر کرتی ہے کہ اسرائیل عالمی قوانین کے ساتھ کھیل رہا ہے۔

قطری وزارت خارجہ کی طرف سے جاری ایک بیان میں‌کہا گیا ہے کہ دوحا بیت المقدس میں فلسطینیوں کے گھروں کی انہدامی کارروائی کی شدید الفاظ میں مذمت کرتا ہے۔ فلسطینیوں کے مکانات کی مسماری ایک عالمی اور انسانیت کے خلاف جرم ہے جس کے بعد عالمی برادری کو فوری طورپر فلسطینیوں کی حمایت میں حرکت میں آنا چاہیے تاکہ صہیونی ریاست کو فلسطینیوں‌پر مظالم ڈھانے اور ان کے گھروں‌کی مسماری سے روکا جاسکے۔بیان میں مزید کہا گیا ہے کہ قطر فلسطینیوں‌کی آزاد ریاست اور سنہ 1967ء کی حدود میں آزاد فلسطینی مملکت کی حمایت جاری رکھے گا۔

یہ بھی دیکھیں

جاپان: خوفناک سمندری طوفان میں 65 ہلاکتوں کی تصدیق

ٹوکیو: جاپان کے وسطی اور شمالی علاقوں میں آنے والے تباہ کن سمندری طوفان ‘ہیگی …