ہفتہ , 23 نومبر 2019

بھارتی فوج کشمیری نوجوانوں کو بجلی کے جھٹکے لگاتی ہے، امریکی اخبار کا انکشاف

نیویارک: امریکی اخبار نے انکشاف کیا ہے کہ بھارتی فوج حراست میں لیے جانے والے کشمیریوں کو بجلی کے جھٹکے دیتی اور انہیں الٹا لٹکا کر تشدد کا نشانہ بناتی ہے۔

واشنگٹن پوسٹ میں شائع ہونے والی رپورٹ میں بھارتی اقدامات کو خلاف جمہوریت قرار دیتے ہوئے کہا گیا ہے کہ امریکی صدر نے مقبوضہ کشمیر کے حل کے لیے کردار ادا نہیں کیا، وادی میں بھارتی فوج کی جبری حراست کے حوالے سےمسلسل اطلاعات موصول ہورہی ہیں۔

امریکی اخبار کے مطابق سیاستدان،ادیب،دانشوراورسماجی کارکن بھارت کی قیدمیں ہیں، 2ماہ سےزیادہ عرصہ گزرنےکےباوجودکشمیرمیں کریک ڈاؤن ہے، 13سال تک کےبچوں کوبھی بھارتی فورسز نے تشدد کا نشانہ بنایا۔

رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ بھارتی فورسز نے حراست میں لیے جانے والے کشمیری نوجوانوں کوبجلی کے جھٹکے دئیے اور انہیں الٹا لٹکا کر تشدد بھی کیا، مودی سرکار عالمی میڈیا اور امریکی سینیٹرز کو کشمیر جانے نہیں دیتی۔

یاد رہے کہ آج بھارتی فوج نے سری نگر میں سابق وزیراعلیٰ فاروق عبداللہ کی ہمشیرہ کو احتجاج کرنے پر گرفتار کیا۔ سابق وزیراعلیٰ کی صاحبزادی اور ہمشیرہ آرٹیکل 370 اے کے خاتمے اور مسلسل نافذ ہونے والے کرفیو کے خلاف مظاہرے کررہی تھیں۔

واضح رہے کہ بھارت نے رواں سال اگست میں مقبوضہ کشمیر کی خصوصی حیثیت کو ختم کرنے کے لیے آرٹیکل میں ترمیم کی جس کے بعد سے وہاں پر مسلسل کرفیو نافذ ہے، وادی میں بھارتی اقدامات کی وجہ سے مواصلات بند ہے جبکہ اشیائے خوردونوش اور ادویات کی بھی شدید قلت پیدا ہوگئی ہے۔

یہ بھی دیکھیں

اسرائیل کا ایران پر مزید دباؤ بڑھانے کا مطالبہ

تل ابیب: اسرائیل کے وزیر خارجہ اسرائیل کیٹس نے ایران کے خلاف بے بنیاد الزامات …