جمعرات , 21 نومبر 2019

ایرانی صدر کے حکم سے فردو میں یورینیم کی افزودگی کا عمل دوبارہ شروع ہوگیا

تہران: اسلامی جمہوریہ ایران کے صدر حسن روحانی کے حکم کے بعد ایران کی فردو سائٹ میں سنٹریفیوجز میں گیس کی فراہمی اور یورینیم کی افزودگی کا عمل دوبار شروع ہوگیا ہے۔

اسلامی جمہوریہ ایران کے صدر حسن روحانی کے حکم کے بعد ایران کی فردو سائٹ میں سنٹریفیوجز میں گیس کی فراہمی اور یورینیم کی افزودگی کا عمل دوبار شروع ہوگیا ہے۔ اس سے قبل ایران کے صدر حسن روحانی نے عالمی طاقتوں کے ساتھ ہونے والے مشترکہ جوہری معاہدے کی روشنی میں اپنے وعدوں میں بتدریج کمی لانے کا اعلان کرتے ہوئے 1044 سینٹری فیوجز کو گیس فراہمی شروع کرنے کا اعلان کیا تھا ۔سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹویٹر پر اپنے بیان میں حسن روحانی نے کہا کہ ‘ایران مشترکہ ایٹمی معاہدے کے تحت معاہدے سے اپنے وعدوں کو کم کرتے ہوئے چوتھے قدم میں ایک ہزار 44 سینٹری فیوجز کو گیس کی فراہمی کا عمل شروع کررہا ہے۔ واضح رہے کہ مشترکہ ایٹمی معاہدے سے امریکہ خارج ہوگیا اور اس نے معاہدے کی خلاف ورزی کرتے ہوئے ایران پر دوبارہ اقتصادی پابندیاں عائد کردیں جبکہ یورپی ممالک نے بھی معاہدے میں کئۓ گئے اپنے وعدوں پر عمل نہیں کیا۔ ایران نے اپنے وعدوں پر مکمل طور پر عمل کیا اور ایک سال تک صبر کرنے کے بعد بتدریج ایٹمی معاہدے سے خارج ہونے کا اعلان کیا ہے۔

یہ بھی دیکھیں

یمن کے کوسٹ گارڈز نے 3 کشتیوں کو ضبط کرلیا

    صنعا: یمن کے کوسٹ گارڈز نے ایک بیان میں کہا ہے کہ یمن …