جمعرات , 21 نومبر 2019

پاکستان کا ایران کیساتھ مشترکہ چیمبر آف کامرس کے قیام پر زور

پشاور: سرحد چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کے چیئرمین نے کہا ہے کہ ہم اسلامی جمہوریہ ایران کے ساتھ مشترکہ چیمبر آف کامرس کے قیام اور علاقے خیبرپختونخواہ میں ایرانی تجار کی سرمایہ کاری کے خواہاں ہیں۔

یہ بات "مقصود انور پرویز” نے جمعرات کے روز ایرانی قونصلر جنرل "محمد باقر بیگی” کے ساتھ دو طرفہ ملاقات کے دوران گفتگو کرتے ہوئے کہی۔
اس موقع پر انہوں نے کہا کہ تہران و اسلام آباد کو اپنی پالیسیوں کو نظر انداز کرکے دوطرفہ تجارتی تعلقات کی رکاوٹوں کو دور کرنے کے لئے کوشش کرنا ہوگا۔
انور پرویز نے کہا کہ دونوں ممالک کے درمیان تجارتی تبادلات کے حجم کو بڑھانے کی ضرورت ہے۔
انہوں نے کہا کہ گوادر اور چابہار بندرگاہیں اسلامی جمہوریہ ایران اور پاکستان کے درمیان تجارتی تعلقات کو فروغ میں اہم کردار ادا کرسکتی ہیں۔
انہوں نے دونوں ممالک کے درمیان مشترکہ دین اور ثقافت کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ ایران اور پاکستان کی گیس پاپ لائن دوطرفہ تعلقات میں اہم سنگ میل ہے۔
ایرانی قونصلر جنرل نے کہا کہ دونوں ممالک کے درمیان بینکاری چینل کا فقدان تجارتی تعلقات کی توسیع کی اہم رکاوٹ ہے۔
بیگی نے کہا کہ دونوں ممالک کے درمیان تجارتی تعلقات کے حجم کو پانچ ارب ڈالر تک بڑھ جانا چاہیئے۔

یہ بھی دیکھیں

یمن کے کوسٹ گارڈز نے 3 کشتیوں کو ضبط کرلیا

    صنعا: یمن کے کوسٹ گارڈز نے ایک بیان میں کہا ہے کہ یمن …