اتوار , 15 دسمبر 2019

ٹماٹر کی قلت دور کرنےکیلئے ایران سے درآمد شروع

اسلام آباد: لاہور سمیت پاکستان بھر میں ٹماٹر کی قلت دور کرنے کےلئے ایران اور افغانستان سے درآمد شروع ہوگئی ہے، امپورٹڈ ٹماٹر مارکيٹ ميں آتو گيا ہے مگر يہ بھی تاجروں کو خاصا مہنگا پڑ رہا ہے ۔

لاہورکی سبزی منڈی میں مقامی ٹماٹر توموجود ہیں مگر کچے پکے ٹماٹروں کی قیمت ایک سو بیس سے ایک سو اسی فی روپے فی کلو تک ہے ۔

قلت کو دور کرنے کےلئے اب ایرانی ٹماٹر براستہ افغانستان درآمد ہو رہا ہے، نقل وحرکت کے اخراجات کی وجہ سے اس کی قیمت بھی کسی طور دوسو روپے سے کم نہیں۔

درآمد کنندگان کہتے ہیں کہ اگر ایرانی ٹماٹر براہ راست تفتان بارڈر سے درآمد کیے جائیں تو قیمت آدھی رہ جائے گی ۔

سیکرٹری ویجیٹیبل امپورٹرز ایسوسی ایشن صدام اطہر خان کا کہنا تھا کہ افغانستان کے راستے درآمد کی وجہ سے چالیس ٹن کے ایک ٹرک پر دس لاکھ روپے کا کرایہ پڑ رہا ہے، حکومت ٹماٹر کی ایران سے براہ راست درآمد کی اجازت دے۔

تاجروں کا کہنا ہے کہ سندھ میں ٹماٹر کی فصل خراب ہونے کی وجہ سے ملک میں قلت پیدا ہوئی، ملک کے دیگر حصوں میں نئي فصل آنے سے ہی مسئلہ حل ہوگا۔

ایک اور تاجر کے مطابق سندھ میں زیادہ بارشوں کی وجہ سے ٹماٹر سمیت مختلف فصلیں تباہ ہوئیں، انشا اللہ اگلے ایک ماہ میں صورت حال بہتر ہوجائے گی۔

ماضی ميں پاکستان اور بھارت ايک دوسرے کے ساتھ سبزيوں کی تجارت کرتے رہے ہيں جو آج کل بند ہے ، تاجروں کا کہنا ہے کہ جب تک مقامی فصل نہیں آجاتی، ٹماٹر کی قیمت میں واضح کمی آنا مشکل ہے ۔

یہ بھی دیکھیں

مشرق وسطی میں امریکا کے نقصان کی قیمت ایران کو اٹھانی پڑے گی، پومپیو

امریکی وزیر خارجہ مائیک پومپیو نے خبردار کیا ہے کہ مشرق وسطیٰ بالخصوص عراق میں …