جمعہ , 14 اگست 2020

اسلامی جہاد کو پہلی مرتبہ مصرمیں اجلاس منعقد کرنے کی اجازت

 (مصر) مصری حکومت نے فلسطینی مزاحمت تحریک اسلامی جہاد کو پہلی مرتبہ اپنی سرزمین پر سیاسی شعبے کا اجلاس منعقد کرنے کی اجازت دے دی ہے۔

اسلامی جہاد کے باخبر ذررائع کا کہنا ہے کہ یہ پہلا موقع ہے کہ مصر نے مزاحتمی جماعت اسلامی جہاد کے سیاسی شعبے کواپنی سرزمین پر  اجلاس منعقد کرنے کی اجازت دی ہے، قاہرہ میں ہونے والے اجلاس میں اسلامی جہاد کی اندرون اور بیرون ملک مقیم قیادت شرکت کرے گی۔گذشتہ روز حماس اور اسلامی جہاد کے وفود کا اجلاس ہوا جس میں دونوں  جماعتوں کی صف اول کی قیادت نے شرکت کی۔دونوں جماعتوں کی اندرون اور بیرون ملک موجود قیادت سوموار کے روز قاہرہ پہنچی تھی۔ ذرائع کاکہنا ہے کہ حماس اور اسلامی جہاد کے وفود کے دورہ مصر کا مقصد فلسطینی دھڑوں میں مصالحت کا عمل آگے بڑھانا اور اسرائیل کے ساتھ غزہ میں جنگ بندی کو مستحکم کرنا ہے۔واضح رہے کہ گزشتہ روز منگل کو اسلامی جہاد کے سیاسی شعبے کے سربراہ زیاد النخالہ اور اسلامی تحریک مزاحمت’حماس’ کے سیاسی شعبے کے سربراہ اسماعیل ھنیہ نےبھی قاہرہ میں طویل ترین ملاقات کی تھی۔

یہ بھی دیکھیں

بھارتی وزیر اعظم نے اپنے حلف کی خلاف ورزی کی ہے : اسد الدین اویسی

سری نگر: آل انڈیا مجلس اتحاد المسلمین کے سربراہ اسد الدین اویسی نے کہا ہے …