پیر , 28 ستمبر 2020

فلسطینی علاقوں میں یہودی آباد کاری غیرآئینی ہے: اٹلی

اٹلی کی حکومت نے فلسطین میں یہودی بستیوں کی تعمیر کے اسرائیلی اقدامات پر اصولی موقف اختیار کرتے ہوئے کہا ہے کہ فلسطینی علاقوں میں یہودی کالونیاں غیر آئینی ہیں جو خطے میں امن مساعی کو آگے بڑھانے میں ایک بڑی رکاوٹ ہیں۔

مرکزاطلاعات فلسطین کے مطابق اطالوی وزارت خارجہ کی طرف سے جاری ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ مشرق وسطیٰ میں دائمی اور دیر پا امن کا راستہ فلسطین اور اسرائیل پر مشتمل دو ریاستی حل سے ہوکر گذرتا ہے۔

قبل ازیں اطالوی وزیرخارجہ لویگی ڈی مایو نے دارالحکومت روم کے فارنسینا ہائوس میں فلسطینی ہم منصب ریاض المالکی سے ملاقات کی۔ اس ملاقات میں دو طرفہ تعلقات اور مشرق وسطیٰ میں دیر پا امن کے قیام کی مساعی پر تبادلہ خیال کیا گیا۔

بیان میں مزید کہا گیا ہے کہ اٹلی فلسطین سے متعلق اقوام متحدہ کی قراردادوں پرعمل درآمد اور عالمی قوانین اور یو این قراردادوں کی روشنی میں اس مسئلے کے حل پر زور دیتا رہے گا۔

 

یہ بھی دیکھیں

ایران اور حزب اللہ کے خلاف شاہ سلمان کی ہرزہ سرائی، مخالف اتحاد بنانے کا مطالبہ

ریاض: سعودی عرب کے شاہ سلمان نے اسلامی جمہوریہ ایران اور اسلامی مزاحمتی تحریک حزب …