اتوار , 29 مارچ 2020

غرب اردن پر صیہونی فوجیوں کی یلغار

غاصب صیہونی حکومت کے فوجیوں اور صیہونی انتہا پسندوں نے غرب اردن کے الخلیل اور نابلس شہروں پر حملہ کر کے فلسطینیوں کو زد و کوب کیا – صیہونی فوجیوں نے شہر نابلس میں الشرقیہ علاقے پر حملہ کیا اور حضرت یوسف پیغمبر کے مزار پر صیہونی انتہا پسندوں کی یلغار کے لئے راستہ ہموار کرنے کے لئے عمارتوں پر چڑھ کر مورچہ سنبھال لیا۔

صیہونی فوجیوں نے فلسطینیوں پر بھی فائرنگ کی جس کے نتیجے میں کئی فلسطینی زخمی ہوگئے۔صیہونی انتہا پسندوں نے صیہونی فوجیوں کی پشتپناہی میں شہر الخلیل کے بعض علاقوں پر حملہ کیا جس کے بعد فلسطینیوں سے ان کی جھڑپیں شروع ہوگئیں۔درایں اثنا ایک سرگرم صحافی محمد عوض نے وفا نیوز ایجنسی کو بتایا کہ صیہونی فوجیوں نے شہر الخلیل میں بیت امر کالونی کے جنوب میں فلسطینی شہریوں پر فائرنگ کی جس کے نتیجے میں تین فلسطینی نوجوان زخمی ہوگئے۔

غاصب صیہونی فوجیوں نے شہر الخلیل کے علاقوں میں تعینات ہو کر وہاں ایک چیک پوسٹ قائم کردی اور فلسطینیوں کی آمد و رفت روک دی۔صیہونی انتہا پسند عناصر اپنے توسیع پسندانہ اہداف کے حصول کے لئے ہر روز فلسطین کے مختلف علاقوں پر حملے کرتے ہیں اور فلسطینیوں سے متصادم ہوتے ہیں جس کے نتیجے میں اب تک فلسطینیوں کی ایک بڑی تعداد زخمی اور گرفتار ہوچکی ہے۔

یہ بھی دیکھیں

بھارت میں لاک ڈاؤن: روزگار کے خاتمے، بھوک کے باعث لوگوں کی بڑی تعداد میں نقل مکانی

بھارت میں کورونا وائرس کے بڑھتے ہوئے خطرے کو روکنے کے لیے حکومت کی جانب …