پیر , 24 فروری 2020

یوکرائنی طیارے کے حادثے پر عالمی ادارے کیساتھ مل کر تحقیقات کا آغاز کردیا ہے: ایران

تہران: اسلامی جمہوریہ ایران نے کہا ہے کہ اس نے عالمی سول ایوی ایشن کے ساتھ مل کر تہران میں حادثے کا شکار ہونے والے یوکرائن کے مسافربردار طیارے پر تحقیقات کا آغاز کردیا ہے.

سید عباس موسوی نے یوکرائنی طیارے کے حوالے سے مغربی میڈیا کی جانب سے منفی پروپیگنڈے کے ردعمل میں کہا کہ ایران بین الاقوامی سول ایوی ایشن آرگنائزیشن (آئی سی اے او) ICAO کے قواعد کے مطابق یوکرائنی طیارے کے گرنے کی وجوہات کے لیے تحقیقات کا آغاز کردیا ہے جس کمیٹی کی شرکت کے لیے پرواز کا سرٹیفکیٹ جاری کرنے والا ملک(یوکرائن)، طیارے کے مالک (یوکرائن)، طیارہ ساز کمپنی (بوئنگ) اور طیارے کےانجن تیار کرنے والی کمپنی (فرانس) کی دعوت دی ہے۔

تفصیلات کے مطابق، حالیہ دنوں میں تہران کے قریب یوکرائن کا ایک مسافر بردار طیارہ آتشزدگی کی وجہ سے گرکر تباہ ہوگیا جس میں 179 مسافر اور 9 عملے سوار تھے جو تمام افراد (147 افراد ایرانی اور 32 افراد غیر ملکی) جاں بحق ہوگئے۔

یہ بھی دیکھیں

امریکی پابندیاں کسی کورونا وائرس سے کم نہیں : ایرانی صدر

ایرانی صدر حسن روحانی نے امریکہ کی نئی پابندیوں کو کورونا وائرس کی نئی قسم …