بدھ , 12 اگست 2020

پاکستان ملی یکجہتی کونسل کے سیکریٹری جنرل لیاقت بلوچ وفد کے ہمراہ ایران سے اظہار ہمدردی کیلئے ایران روانہ

اسلام آباد: پاکستان کی ملی یکجہتی کونسل اور سیاسی اور مذہبی جماعتوں کے 35 اتحاد کے آٹھ افراد پر مشتمل ایک وفد منگل کے روز جنرل قاسم سلیمانی کی شہادت اور یوکرائنی طیارے گرجانے پر اظہار ہمدردی کے لئے اسلامی جمہوریہ ایران روانہ ہوگیا.پاکستان کی ملی یکجہتی کونسل کے سیکریٹری جنرل "لیاقت بلوچ” اور ان کے ہمراہ وفد لاہور کے بین الاقوامی ہوائی اڈے سے مشہد مقدس روانہ ہوگئے.پاکستانی وفد اپنے آٹھ روزہ دورے کے دوران مشہد مقدس، قم اور تہران کا دورہ کرکے ایرانی حکام کے ساتھ ملاقاتیں کریں گے.
یاد رہے کہ پاکستانی وزیر خارجہ نے اتوار کے روز مشہد میں امام رضا علیہ السلام کے روضے مطہر کی زیارت کے بعد تہران کا دورہ کیا.
انہوں نے تہران کے دورے پر صدر حسن روحانی اور اپنے ہم منصب "محمد جواد ظریف” کے ساتھ ملاقات کی.انہوں نے جنرل قاسم سلیمانی اور ان کے ساتھیوں اور یوکرائنی طیارے گرجانے پر اپنی تعزیت کا اظہار کیا.تفصیلات کے مطابق 3 جنوری کو عراق کے دارالحکومت بغداد کے ایئرپورٹ پر امریکہ کی جانب سے راکٹ حملے کیے گئے جس کے نتیجے میں پاسداران انقلاب کے کمانڈر قدس جنرل قاسم سلیمانی سمیت عراق کی عوامی رضاکار فورس الحشد الشعبی کے ڈپٹی کمانڈر "ابومهدی المهندس” شہید ہوگئے۔
خیال رہے ایران کی جانب سے عراق میں امریکی فوجی اڈوں پر میزائل حملے ختم ہونے کے کچھ گھنٹے بعد یوکرین کا طیارہ ایران کے امام خمینی ائیرپورٹ کے قریب گر کر تباہ ہوگیا جس میں سوار 167 مسافر اور 9 عملے جاں بحق ہوگئے تھے۔
مسافر طیارہ تہران سے یوکرین کے دارالحکومت کیف جا رہا تھا.ایرانی مسلح افواج اندرونی تحقیقات کے بعد اس نتیجے پر پہنچیں کہ میزائل انسانی غلطی کی وجہ سے فائر ہوا جس کے نتیجے میں یوکرائنی طیارہ تباہ ہوا، اور معصوم لوگ جاں بحق ہوگئے۔

یہ بھی دیکھیں

بھارتی وزیر اعظم نے اپنے حلف کی خلاف ورزی کی ہے : اسد الدین اویسی

سری نگر: آل انڈیا مجلس اتحاد المسلمین کے سربراہ اسد الدین اویسی نے کہا ہے …