جمعہ , 22 مارچ 2019

لندن : امریکی سفارت خانے کے سامنے صیہونیت مخالف یہودیوں اور عیسائیوں کا دھرنا

download (2)

لندن (مانیٹرنگ ڈیسک) لندن میں عالمی یوم القدس کے مظاہرے اتوار کے روز منعقد کئے جس میں مختلف طبقات سے تعلق رکھنے والے لوگوں نے شرکت کی۔ذرائع کے مطابق ہرسال کی طرح اس سال بھی عالمی یوم القدس کی مناسبت سے اتوار کے روز ہونے والے مظاہروں میں روزہ دار مسلمانوں کی بڑی تعداد کے علاوہ شہری اور انسانی حقوق کے لئے کام کرنے والوں، جنگ مخالفین اور صیہونیت مخالف یہودیوں اور عیسائیوں نے بھی شرکت کی۔ مظاہرے کے نتیجے میں لندن کی کئی شاہراہوں پر ٹریفک معطل رہا۔مظاہرین، لندن کی بعض سڑکوں پر مارچ کرتے ہوئے امریکی سفارت خانے کے سامنے جمع ہوئے اور انہوں نے اسرائیل کے لئے امریکی حمایت بند کرنے کا مطالبہ کیا۔ ایسا ہی ایک اجتماع لندن میں بی بی سی کی عمارت کے سامنے بھی ہوا جس میں شریک لوگ، اسرائیل کے مجرمانہ اقدامات پر بی بی سی کی خاموشی کی مذمت میں نعرے لگا رہے تھے۔مظاہرے کے شرکاء نے اپنے ہاتھوں میں فلسطین، حزب اللہ اور حماس کے پرچموں کے علاوہ ایسے بینرز اور پلے کارڈز اٹھا رکھے تھے جن پر فلسطینیوں کی حمایت اور اسرائیل کی مذمت اور بائیکاٹ کے حق میں نعرے درج تھے۔ مظاہرین نے داعش اور اسرائیل کو ایک ہی سکے کا دوسرا رخ قرار دیتے ہوئے سرزمین فلسطین کو آزاد کرانے کا عزم بھی ظاہر کیا۔

یہ بھی دیکھیں

سمجھوتا ایکسپریس کیس پر سابق بھارتی جج کا رد عمل

نئی دہلی(مانیٹرنگ ڈیسک) سانحہ سمجھوتا ایکسپریس پر سابق بھارتی جج مرکنڈے کاٹجو نے بھی رد ...