ہفتہ , 15 اگست 2020

امریکی سائنس دانوں نے رونگٹے کھڑے ہونے کی اصل وجہ جان لی

رونگٹنے کھڑے ہونے کی اصل وجہ سائنسدانوں نے جان لی،میڈیارپورٹس کے مطابق امریکا کی معتبر ہارورڈ یونیورسٹی کے سائنسدانوں نے کہاکہ انہوں نے اس کی وجہ دریافت کرلی ہے۔ان سائنسدانوں کا کہنا تھا کہ خلیات کی جو اقسام رونگٹے کھڑے ہونے کا باعث بنتی ہیں وہ بالوں کی جڑوں اور بالوں کے اسٹیم سیلز کو ریگولیٹ کرنے میں بھی اہم کردار ادا کرتی ہیں۔جلد کے اندر جو مسلز رونگٹے کھڑے ہونے کا باعث بنتے ہیں وہ بالوں کی جڑوں کے اسٹیم سیلز سے اعصابی رابطے میں پل کے لیے ضروری ہیں۔یہ اعصاب سردی میں مسلز کے کھچا پر ردعمل ظاہر کرتے ہیں اور کچھ وقت کے لیے رونگٹے کھڑے ہونے کا باعث بنتے ہیں جبکہ بالوں کی جڑوں کے ساتھ طویل المعیاد بنیادوں پر نئے بالوں کی نشوونما کو متحرک کرتے ہیں۔چوہوں پر تجربات کے دوران محققین نے خلیات کی مختلف اقسام اور اسٹیم سیلز کے درمیان تعلق کے بارے میں زیادہ بہتر طور پر جانا اور دیکھا کہ باہری ماحول سے ان میں کیا تبدیلیاں آتی ہیں۔انہوں نے بتایا کہ ہم ہمیشہ سے اسٹیم سیلز کے باہری تحرک کے حوالے سے رویوں کو سمجھنے میں دلچسپی رکھتے تھے، جلد کا اپنا ایک مسحور کن نظام ہے، اس میں متعدد اسٹیم سیلز خلیات کی مختلف اقسام کو متحرک کرتے ہیں، وہ ہمارے جسم اور باہری دنیا کے درمیان تعلق کا باعث بنتے ہیں۔ان کا کہنا تھا کہ اس تحقیق میں ہم نے ہم نے جانا کہ اسٹیم سیلز کا دوہرا نظام کس طرح کام کرتا ہے جو نہ صرف مستحکم خلیات کو ریگولیٹ کرتے ہیں بلکہ باہری درجہ حرارت سے بھی اسٹم سیلز کے رویے میں فرق آتا ہے۔متعدد اعضا 3 اقسام کے ٹشوز سے بنے ہوتے ہیں اور جلد میں یہ تینوں ایک خصوصی انتظام کے تحت منظم ہوتے ہیں جن میں سیمپھتک اعصاب بھی شامل ہیں جو جسم کے باہری ردعمل کو کنٹرول کرنے والے اعصابی نظام کا حصہ ہیں، جو ایک ننھے مسل سے جڑے ہوتے ہیں۔یہ مسل بالوں کی جڑوں سے منسلک اسٹیم سیلز سے جڑے ہوتے ہیں جو بالوں کی نشوونما کے لیے اہم ہیں۔یہی رونگٹے کھڑے ہونے کا باعث بھی بنتا ہے جو جسم میں ٹھنڈ کی لہر کو اعصابی سگنل کے طور پر بھیجتی ہے جس پر مسل ردعمل ظاہر کرتے ہوئے کھچا محسوس کرتا ہے اور ننھے بالوں کو کھڑا کردیتا ہے۔

یہ بھی دیکھیں

امریکی صدر سے کوئی معاہدہ نہیں ، مارک زکربرگ

فیس بک کے بانی مارک زکربرگ نے سچ بتا دیا۔مارک زکربرگ نے بتایا کہ امریکی …