پیر , 12 اپریل 2021

روس: 200خواتین کو قتل کرنیوالا سفاک سیریل کلر

ماسکو: روس میں درجنوں خواتین کو زیادتی کے بعد قتل کرنیوالے سیریل کلر نے مزید 2 خواتین کے قتل کا اعتراف کرلیا، جس کے بعد مجموعی تعداد 83 ہوگئی۔ حکام کا کہنا ہے کہ ملزم کے ہاتھوں کا نشانہ بننے کے بعد قتل ہونیوالی خواتین کی تعداد 200 تک ہوسکتی ہے۔ابلاغ نیوز نےغیر ملکی میڈیا کا حوالہ دیتے ہوئے لکھا ہے کہ میخائل پوپکوف ویئر وولف کے نام سے جانا جاتا تھا۔ روسی حکام کا ماننا ہے کہ اس سفاک مجرم کے ہاتھوں قتل ہونے والی خواتین کی تعداد 100 سے 200 تک ہوسکتی ہے۔

میخائل پوپکوف سابق روسی فوجی اہلکار ہے، سیریل کلر پر دو مرتبہ 18 سے 50 سال کی عمر کی خواتین کی آبروریزی اور قتل کیلئے مقدمہ ہوچکا ہے۔میخائل نے زیادہ تر خواتین کا قتل سال 1992ء سے 2010ء کے درمیان کیا تھا۔پولیس کے مطابق اس کے ہاتھوں قتل ہونیوالی خواتین کی آفیشل تعداد 83 ہوچکی ہے۔تفتیشی افسر لیفٹیننٹ کرنل ایور جے چووسکی کا کہنا ہے کہ انہیں یقین ہے کہ پوپکوف نے 200 لوگوں کو قتل کیا ہے اور 100 سے زیادہ جرائم کئے ہیں۔

اس سیریل کلر کی ایک ویڈیو بھی سامنے آئی تھی جس میں وہ ایک جاسوس کو وہ جگہ دکھانے لے گیا تھا جہاں اس نے ایک خاتون کو ریپ کے بعد قتل کیا تھا۔سیریل کلر خواتین کو زیادتی کا نشانہ بنانے کے بعد انتہائی سفاکانہ طریقے سے قتل کرتا تھا، جس میں ہتھوڑوں کے وار کرکے یا پیچ کس استعمال کیا جاتا تھا۔

یہ بھی دیکھیں

میانمار مظاہرین کے جلوس جنازہ پر فوج کی فائرنگ

میانمار میں فوجی بغاوت کے خلاف مظاہروں اور مظاہرین پر فوج کی فائرنگ کا سلسلہ …