ہفتہ , 31 اکتوبر 2020

اسرائیل کے ساتھ معاہدہ کرنے والے خیانت کاروں کے خلاف مظاہرے

امریکی دباو پر اسرائیل کے ساتھ معاہدہ کرنے والے خیانت کاروں کے خلاف عالمی سطح پر مظاہروں کا سلسلہ بدستور جاری ہے۔

بحرین اور امارات کے ساتھ اسرائیل کے معاہدے کے خلاف دنیا بھر میں مظاہرے ہو رہے ہیں۔ جبکہ فلسطین کے تقریبا تمام علاقوں میں معاہدے کے خلاف مظاہرہ کیا گیا اورلاکھوں افراد نے فلسطین چارٹر نامی مہم کی حمایت میں دستخط کئے۔ ان مظاہروں میں فلسطینی مسلمانوں نے عرب اقوام سے خائن عرب حکمرانوں کو کیفر کردار تک پہنچانے کا بھی مطالبہ کیا۔

فلسطینیوں کا کہنا ہے کہ اسرائیل کا مقبوضہ علاقوں کو چھوڑنا ہی مشرقِ وسطی میں امن لا سکتا ہے۔

بحرین میں بھی احتجاجی مظاہرے ہو رہے ہیں۔

بحرین اور امارات کے ساتھ معاہدے کے بعد بھی اسرئیل باز نہ آیا اورغزہ پر بم گرا دیئے۔ فلسطینی اتھارٹی نے بم گرانے کی تصدیق کی ہے۔

گذشتہ روز وائٹ ہاؤس میں بحرین اور امارات نے اسرائیل کے ساتھ سفارتی تعلقات کے معاہدے پر دستخط کیے تھے۔ اس موقع پر وہائٹ ہاوس کے باہر زبردست مظاہرہ ہوا اور مظاہرین نے اسرائیل کو دہشت گرد ریاست قرار دیتے ہوئے فلسطینیوں کے حقوق کے حصول پر تاکید کی۔

یہ بھی دیکھیں

سعودی عرب اور عرب امارات اسرائیل کی نیابتی جنگ کر رہے ہیں: انصاراللہ

صنعا: یمن کی عوامی تحریک انصاراللہ نے کہا ہے کہ سعودی عرب اور متحدہ عرب …