منگل , 13 اپریل 2021

شہید قاسم سلیمانی کے خون کا انتقام امریکہ سے لے کر رہیں گے

سپاہ پاسداران کے ایرواسپیس شعبے کے سربراہ جنرل امیرعلی حاجی زادہ نے بھی امریکہ سے انتقام لئے جانے پر زوردیا ہے-

 اسلامی جمہوریہ ایران کے ایرواسپیس کے سربراہ جنرل امیرعلی حاجی زادہ نے اس عزم کا اعادہ کیا ہے کہ جنرل قاسم سلیمانی کے قتل کا بدلہ ایک حتمی اور یقینی امر ہے۔

جنرل امیرعلی حاجی زادہ کا بیان سپاہ پاسداران انقلاب اسلامی کے سربراہ جنرل حسین سلامی کے اس بیان کے فورا بعد سامنے آیا ہے جو انہوں نے عراقی وزیردفاع کے ساتھ ملاقات کے موقع پردیا تھا۔ ان کا کہنا تھا کہ اس واقعے کے تعلق سے قانونی طریقہ کار سے ہٹ کر شہید قاسم سلیمانی کے خون کا انتقام امریکہ سے لے کر رہيں گے۔ ان کا کہنا تھا عراقی جوان بھی اپنے شہید کمانڈر جنرل ابومہدی المہندس کے خون کا انتقام ضرورلیں گے۔

 عراق کے وزیردفاع جمعہ عناد سعدون نے پیر کے روز جنرل امیرعلی حاجی زادہ سے ملاقات کی، اس موقع پر جنرل حاجی زادہ نے امریکہ کے ہاتھوں شہید قاسم سلیمانی کے قتل کا انتقام لئے جانے کوحتمی اور یقینی بتایا اور کہا ملت ایران و عراق ہرگز اس بات کو فراموش نہیں کرے گی کہ امریکی دہشت گرد نے الحاج قاسم سلیمانی کو جو آپ کے مہمان تھے، اور آپ کے گھر میں تھے، شہید کردیا اور ہمیں اس بات کو بھی نہیں بھولنا چاہیے کہ عراق کے قوی ہیرو ابومہدی المہندس کو بھی امریکہ نے ہی شہید کیا ہے۔

اس موقع پرعراقی وزیردفاع جمعہ عناد سعدون نے کہا کہ عراق داعش کے مقابلے میں، اسلامی جمہوریہ ایران کی مدد و حمایت اور تعاون کو ہرگز فراموش نہيں کرے گا۔

جمعہ عناد سعدون نے کہا کہ مجھے امید ہے کہ دفاعی امور سمیت ایران اور عراق کے درمیان تعاون میں فروغ آئے گا۔

یہ بھی دیکھیں

ایران و چین معاہدے پر امریکہ چراغ پا

امریکی صدر نے ایران اور چین کے 25 سالہ معاہدے پر سخت تشویش کا اظہار …