پیر , 12 اپریل 2021

جوہری توانائی کی عالمی ایجنسی کے خلاف قانونی کاروائی کریں گے ، ایران

آئی اے ای اے کے ذریعے مغربی ذرائع ابلاغ کو دی گئی رپورٹ کے سلسلے میں ہم قانونی اقدامات کریں گے، یہ اعلان اقوام متحدہ کے ویانا ہیڈ کواٹر میں ایران کے نمائندے کاظم غریب آبادی نے کیا ہے۔

آئی آر آئی بی نیوز کے نمائندے سے گفتگو کرتے ہوئے کاظم غریب آبادی نے واضح کیا کہ جامع ایٹمی معاہدے کے حوالے سے جوہری توانائی کی عالمی ایجنسی آئی اے ای اے کی تمام رپورٹس اور اسکے ساتھ ہونے والی تمام خط و کتابت خفیہ ہوتی ہے۔

انہوں نے کہا کہ گزشتہ دو دہائیوں میں خفیہ معلومات کے تحفظ کے حوالے سے آئی اے ای اے کے کردار کے سلسلے میں ایران کو تحفظات رہے ہیں۔

ایران کے نمائندے کا کہنا تھا کہ قانونی جارہ جوئی سے قبل جوہری پروگرام کے حوالے سے ایران کی خفیہ معلومات کو عام کرنے کا حق صرف ایران کو حاصل ہے۔

خیال رہے کہ جمعے کے روز بعض مغربی ذرائع نے یہ انکشاف کیا تھا کہ آئی اے ای اے نے اپنے رکن ممالک کو بتایا ہے کہ ایران، نطنز جوہری پلانٹ میں مزید پیشرفتہ سینٹریفیوجز آئی آر ٹو ایم نصب کرنا چاہتا ہے۔

یہ پہلا اتفاق نہیں کہ آئی اے ای اے نے ایران کے بارے میں خفیہ اطلاعات ذرائع ابلاغ کو دی ہوں۔

 جوہری توانائی کی عالمی ایجنسی کے اس اقدام پر ماضی میں روس بھی معترض رہا ہے۔

یہ بھی دیکھیں

ایران و چین معاہدے پر امریکہ چراغ پا

امریکی صدر نے ایران اور چین کے 25 سالہ معاہدے پر سخت تشویش کا اظہار …