اتوار , 18 اپریل 2021

امریکی فوجی دہشتگردوں کو شام سے فوری نکل جانا چاہیئے ، ایران

اقوام متحدہ میں ایران کے مستقل مندوب نے اس جانب اشارہ کرتے ہوئے کہ شام میں امریکی فوجیوں کی موجودگی غیر قانونی ہے اس ملک سے فوری طور پر امریکہ کے دہشتگرد فوجیوں کےفوری انخلا کا مطالبہ کیا۔

ابلاغ نیوز کی رپورٹ کے مطابق اقوام متحدہ میں ایران کے مستقل مندوب مجید تخت روانچی نے اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے جو شام کے حوالے سے منعقد ہوا شام میں امریکی فوجیوں کی موجودگی کو غیر قانونی اور خفیہ مقاصد کیلئے قرار دیتے ہوئے کہا کہ شام میں موجود تمام غیر ملکی فورسز کو جو غیر قانونی طریقے سے تعینات ہیں فوری طور پر نکل جانا چاہئیے۔

مجید تخت روانچی نے کہا کہ سب کو شام کی ارضی سالمیت، خودمختاری اور آزادی کا احترام کرنا چاہئیے۔

اقوام متحدہ میں ایران کے مستقل مندوب نے کہا کہ ایران، شام کے بحران کو سیاسی طریقے سے حل کرنے پر تاکید کرتا ہے۔

واضح رہے کہ شام کا بحران دو ہزار گیارہ میں امریکہ، سعودی عرب اور ان کے اتحادیوں کے حمایت یافتہ دہشت گردوں کے حملے اور جارحیت سے شروع ہوا  جس کا مقصد علاقے میں غاصب صیہونی حکومت کے لئے حالات کو سازگار بنانا ہے۔

امریکہ کے باوردی دہشتگرد، دیگر دہشتگرد ٹولوں سے جنگ کے بہانے غیرقانونی طور پر شام کے  بعض علاقوں پر قابض ہیں۔ شام کے حکام نے بارہا زور دے کر کہا ہے کہ شام میں امریکی اقدامات غاصبانہ قبضے کے مترادف ہیں۔

یہ بھی دیکھیں

ایران و چین معاہدے پر امریکہ چراغ پا

امریکی صدر نے ایران اور چین کے 25 سالہ معاہدے پر سخت تشویش کا اظہار …