منگل , 13 اپریل 2021

سعودی اتحاد کے فوجی اڈے میں دھماکہ

غیر ملکی ذرائع نے یمن میں جارحیت کرنے والے سعودی اتحاد کے ایک فوجی اڈے میں دھماکے کی خبر دی ہے۔

قطر کے الجزیرہ ٹی وی کے مطابق یمن کے صوبے ابین میں سعودی عرب کی ایک فوجی چھاؤنی میں خوفناک دھماکہ ہوا ہے۔ اس واقعے کی تفصیلات اور ہونے والے ممکنہ جانی و مالی نقصان کی اطلاعات ابھی تک موصول نہیں ہوئی ہیں۔

رپورٹ کے مطابق سعودی عرب کی ایک فوجی کمیٹی صوبہ ابین میں یمن کی مستعفی ہونے والی حکومت اور عرب امارات کے حمایت یافتہ علیحدگی پسند گروہ کے مابین ہونے والے معاہدے کے نفاذ کے حوالے سے تشویش میں مبتلا ہے۔

یاد رہے کہ سعودی عرب اپنے اتحادیوں کے ہمراہ مارچ دوہزار پندرہ سے یمن میں بہیمانہ جارحیت میں مصروف ہے اور سعودی عرب کے براہ راست زمینی و فضائی حملوں کے نتیجے میں اب تک سترہ ہزار سے زائد عام شہری شہید اور دسیوں ہزار زخمی ہو چکے ہیں جبکہ لاکھوں یمنی دربدری کی زندگی گزارنے پر مجبور ہو ئے ہیں۔ اسکے علاوہ سعودی جارحیت اور اسکے مکمل محاصرے کے باعث دسیوں لاکھ یمنی اور بالخصوص بچے وبائی امراض اور بھوک مری کے شدید خطرات سے روبرو ہو چکے ہیں۔اس انسانیت سوز جارحیت میں مغربی ممالک بالخصوص امریکہ کے علاوہ غاصب صیہونی ٹولہ بھی سعودی عرب کی حمایت و نصرت میں پیش پیش ہے۔

 

یہ بھی دیکھیں

ایران و چین معاہدے پر امریکہ چراغ پا

امریکی صدر نے ایران اور چین کے 25 سالہ معاہدے پر سخت تشویش کا اظہار …