منگل , 13 اپریل 2021

وزیراعظم اور آرمی چیف آج کوئٹہ جائیں گے

کوئٹہ میں سانحہ مچھ کے شہدا کی تدفین کے موقع پر وزیر اعظم عمران خان اور آرمی چیف جنرل قمر باجوہ بھی کوئٹہ جائیں گے۔

وزيراعظم عمران خان آج بروز ہفتہ 9 جنوری کو کوئٹہ کیلئے روانہ ہوں گے۔ وفاقی وزیر داخلہ شيخ رشيد احمد بھی ان کے ساتھ ہوں گے۔ کوئٹہ روانگی کیلئے شیخ رشید ایئربیس پر موجود ہیں، جب کہ وزیراعظم خان کا انتظار کیا جا رہا ہے۔

کوئٹہ آمد پر وزیراعظم شہد ایکشن کمیٹی اور لواحقین سے بھی ملاقات اور لواحقین سے تعزیت کریں گے۔

دوسری جانب بحرین کے دورے پر موجود آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ نے بھی کوئٹہ جانے کا فيصلہ کيا ہے۔ آرمی چيف کسی بھی وقت الگ کوئٹہ کا دورہ کرسکتے ہيں۔

قبل ازیں اسلام آباد میں تقریب سے خطاب میں وزیراعظم عمران خان کا کہنا تھا کہ لواحقین شہدا کی تدفین کردیں، میں اسی دن کوئٹہ کیلئے روانہ ہو جاؤں گا۔

وفاقی وزیر داخلہ شیخ رشید احمد اور معاون خصوصی فردوس عاشق اعوان کا بھی یہ کہنا تھا کہ وزیراعظم عمران خان کسی بھی وقت کوئٹہ کا دورہ کر سکتے ہیں۔

قبل ازیں ایم ڈبلیو ایم نے وزیراعظم کے کوئٹہ نہ آنے پر اسلام آباد کی جانب لانگ مارچ کا اعلان کیا تھا۔ مجلس وحدت المسلمین کے مرکزی رہنما آغا رضا کا کہنا تھا کہ عمران خان کی آمد تک دھرنا جاری رکھیں گے۔ اگر عمران خان دھرنے میں نہ آئے تو شہداء کے جنازوں کے ساتھ اسلام آباد مارچ کرینگے

واضح رہے کہ رواں ماہ 3 جنوری کو بلوچستان کے ضلع بولان کی تحصیل مچھ کی کوئلہ فیلڈ میں فائرنگ کا واقعہ پیش آیا تھا جس میں دہشت گردوں نے ہزارہ برادری سے تعلق رکھنے والے کان کنوں کو آنکھوں پر پٹیاں اور ان کے ہاتھ پاؤں باندھ کر انہیں اس وقت ذبح کیا ، جب کان کن اعلیٰ الصبح فیلڈ پر جانے کیلئے موجود تھے۔

حملے کی ذمہ داری عالمی کالعدم دہشت گرد تنظیم داعش کی جانب سے ان کی ویب سائٹ عماق پر قبول کی گئی تھی۔ یہاں یہ بات بھی قابل ذکر ہے کہ اس سے قبل بھی ہزارہ برادری اور دیگر مسلک سے وابستہ افراد پر حملے اور قتل کی ذمہ داری داعش کی جانب سے قبول کی گئی ہیں۔

یہ بھی دیکھیں

ایران و چین معاہدے پر امریکہ چراغ پا

امریکی صدر نے ایران اور چین کے 25 سالہ معاہدے پر سخت تشویش کا اظہار …