جمعرات , 4 جون 2020

شامی صدر کے عہدہ چھوڑنے کے مطالبے سےترکی دستبردار

0412

استنبول(مانٹیرنگ ڈیسک )ترکی شامی صدر بشارالاسد کے عہدہ چھوڑنے کے مطالبے سے دستبردار ہوگیا،ترک وزیراعظم بن علی یلدرم کا کہنا ہے کہ بشارالاسد کوعبوری طور پر تسلیم کرتے ہیں۔استنبول میں میڈیا سے بات کرتے ہوئے ترک وزیراعظم بن علی یلدرم کا کہنا تھا کہ ترکی آئندہ چھ ماہ کے دوران خانہ جنگی کے شکار ملک شام سے متعلق اہم اور موثر کردار ادا کرے گا۔ان کا کہنا تھا کہ شام میں قیام امن کے لیے ترکی اپنا کردار ادا کرتا رہے گا۔ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ شامی صدر بشارالاسد کو طویل مدتی رہنما کے طور پر تسلیم نہیں کرتے تاہم عبوری طور پر تسلیم کرتے ہیں، ہمیں پسندہو یا نہ ہو مگر یہ حقیقت ہے کہ بشارالاسد کا شام میں اہم کردار ہے۔ واضح رہے کہ ترک صدر رجب طیب اردوان نے ایک ہفتے قبل صدر بشارالاسد کے حامی روسی صدر سے ملاقات بھی کی تھی۔

یہ بھی دیکھیں

ترک صدر طیب ایردوآن کی ” اعلیٰ ظرفی”،7 سال قبل تنقید پر دوشیزہ سے انتقام

کہتے ہیں کہ بڑے لوگوں کے دل بڑے اور ظرف وسیع ہوتے ہیں مگر ترکی …