اتوار , 20 اکتوبر 2019

اسلام کے نام پر قتل کرنیوالے دہشت گرد جہنمی ہیں، شاہ مراکش

851591_39076190

مراکو(مانٹیرنگ ڈیسک ) مراکش کے فرمانروا شاہ محمد چہارم نے انتہاپسندی کے خلاف ایک متحدہ محاذ کے قیام کیلئے اپیل کرتے ہوئے زور دیا ہے کہ دیار غیر میں مقیم مراکشی شہری اسلام کے تحمل پر مبنی اقدار کے پرچا کرنے والے بنیں۔ اسلام کے نام پر قتل کرنے والے دہشت گرد جہنمی ہیں ، غیر ملکی میڈیا کے مطابق محمد چہارم نے بیرون ملک مقیم پچاس لاکھ مراکشی شہریوں سے مطالبہ کیا کہ وہ اپنی سکونت والے ممالک میں امن، ہم آہنگی اور اتحاد کا دفاع کریں ۔ مراکشی فرمانروا کا کہنا تھا کہ ہم بے گناہ اور معصوم لوگوں کے قتل کی مذمت کرتے ہیں۔ ان کا مزید کہنا تھا کہ پچھلے ماہ فرانس میں ایک پادری کے قتل کا واقعہ ناقابل تلافی ہے ۔ یورپ اور خصوصاً فرانس میں حالیہ عرصے کے دوران دہشت گردی کی کارروائیوں میں اضافہ دیکھنے میں آیا ہے اور مراکشی نژاد یورپی شہریوں سمیت کئی دہری شہریت رکھنے والے افراد کو فرانس اور بیلجیم میں حملوں کے الزام میں گرفتار کیا گیا ہے ۔محمد چہارم اس سے قبل بھی اپنے شہریوں کو اسلام کی پُر امن تعلیمات پر عمل پیرا ہونے کی دعوت دیتے رہتے ہیں، مگر ہفتہ کے روز کئے جانے والے اس خطاب میں مراکشی بادشاہ نے خصوصاً تارکین وطن کو مخاطب کیا۔ مراکش کی جانب سے روا داری اور اعتدال پسند اسلام کی تبلیغ کرتے ہوئے اپنے آپ کو افریقہ اور مسلم دنیا میں انتہا پسندی کے خلاف ایک اہم آواز کے طور پر منوا لیا ہے

یہ بھی دیکھیں

ترکی کے اتحادیوں کی جارحیت کا جواب دیں گے:شام

دمشق: شام کے صدر بشار اسد نے دمشق میں عراق کی قومی سلامتی کے مشیر …