ہفتہ , 20 جولائی 2019

اسرائیل پانچ سال میں جوہری معاہدے کی توثیق کردے ، اقوام متحدہ

[caption id="attachment_43823" align="alignnone" width="300"]Israeli Prime Minister Benjamin Netanyahu climbs out after a visit inside the Rahav, the fifth submarine in the fleet, after it arrived in Haifa port January 12, 2016. The Dolphin-class submarines, widely believed to be capable of firing nuclear missiles, were manufactured in Germany and sold to Israel at deep discounts as part of Berlin's commitment to shoring up the security of the country set in part as a haven for Jews who survived the Holocaust.REUTERS/Baz Ratner - RTX221FU
[/caption]اقوام متحدہ(مانٹیرنگ ڈیسک) اقوام متحدہ کے تحت جوہری ہتھیاروں کے تجربات پر پابندی کے جامع معاہدے ( سی ٹی بی ٹی) پر عمل درآمد کرانے کی ذمے دار تنظیم کے سربراہ نے اسرائیل سے کہا ہے کہ وہ آیندہ پانچ سال کے دوران سی ٹی بی ٹی کی توثیق کردے۔لاسینا ضربو نے امریکی خبررساں ادارے ایسوسی ایٹڈ پریس ( اے پی) کے ساتھ ایک انٹرویو میں کہا ہے کہ اسرائیل کو معاہدے کی توثیق کرنے والا اگلا اہم ملک ہونا چاہیے اور مجھے امید ہے کہ اس میں پانچ سال سے کم عرصہ لگے گا۔انھوں نے کہا کہ گذشتہ سال ایران اور چھے بڑی طاقتوں کے درمیان طے شدہ جوہری معاہد ے سے مشرق وسطیٰ میں اعتماد کی فضا بحال ہوئی ہے اور اس سے دوسروں کو بھی آگے آنے میں مدد ملے گی۔

یہ بھی دیکھیں

طالبان نے وردک میں درجنوں طبی مراکز بند کرادیئے

افغانستان میں غیرملکی این جی او کےتحت چلنے والے درجنوں طبی مراکز طالبان نے بند …