منگل , 17 ستمبر 2019

دہشت گردی کے خاتمے کے لیے پاکستان کی قربانیاں قابل تعریف ہیں: جان کیری

2016-02-29-16-48-009211_Generic

نئی دہلی (مانٹیرنگ ڈیسک) امریکی وزیرخارجہ نےاعتراف کیا ہے پاکستان نے دہشت گردی سے بہت نقصان اٹھایا، پچاس ہزار پاکستانی دہشت گردی کا نشانہ بنے، ہم سب کو پاکستان کی حمایت کرنی چاہیئے۔امریکی وزیر خارجہ جان کیری جو بھارت کے دورے میں نئی دہلی کی آئی ٹی یونیورسٹی سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ دہشتگرد پاک بھارت تعلقات کو متاثر کر رہے ہیں، پاکستان میں پچاس ہزارسے زائد لوگ دہشت گردی کا نشانہ بنے، یہ سمجھنا چاہئیے کہ شدت پسندی سے بتدریج نمٹنا کتنا مشکل ہے۔انھوں نے کہا کہ پاکستان کو اپنے ملک میں ان گروپوں کے خلاف سخت اقدامات کرنے کی ضرورت ہے، جو انتہا پسندی کی کارروائیوں میں ملوث ہیں۔جان کیری نے کہاکہ دہشتگردوں کی پناہ گاہیں ختم کرنے کیلئے پاکستان کے ساتھ کام کرنا ہوگا۔اس سے قبل امریکی وزیر خارجہ نے بھارتی وزیر خارجہ سمشا سوارج سے بھی ملاقات کی تھی ، انکا کہنا تھا کہ ان کا ملک اچھے اور برے دہشت گردوں میں نہ فرق کرتا ہے اور نہ کر سکتا ہے اور وہ ممبئی اور پٹھان کوٹ پر حملہ کرنے والوں کو کیفر کردار تک پہنچانے کی تمام کوششوں کی حمایت کرتا ہے۔بھارتی وزیر خارجہ سشما سوراج کا کہنا تھا کہ سرحد پار پاکستان سے دہشت گردی کی اعانت کا معاملہ بھی زیر غور آیا اور امریکہ انڈیا کے اس موقف سے اتفاق کرتا ہے کہ دہشت گردوں کو اچھے یا برے زمرے میں تقسیم کرکے ان میں فرق نہیں کیا جاسکتا۔دوسری جانب امریکی محکمہ خارجہ نے پینٹاگون سے اختلافات کی تردید کردی تھی اور کہا تھا کہ ہ سیکریٹری خارجہ جان کیری اور پینٹاگون کے بیانات میں کوئی اختلاف نہیں، دہشت گردی کے خلاف دونوں کا موقف ایک ہی ہے۔امریکی محکمہ خارجہ کےترجمان جان کربی نے کہا امریکا پاکستانی قیادت سے مسلسل رابطے میں ہے، دہشت گردوں کےخاتمہ کیلئے پارٹنرزکے ساتھ تعاون جاری رکھیں گے۔

یہ بھی دیکھیں

کشمیریوں کی حمایت میں جنیوا میں ٹیکسی مہم جاری

جنیوا(مانیٹرنگ ڈیسک) جینیوا میں اقوام متحدہ کی انسانی حقوق کونسل کے اجلاس کے دوران مقبوضہ …