ہفتہ , 21 اکتوبر 2017

زندگی کوکامیاب بنانے والی 11 مشکل عادات

55fefe5e8986e

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک)کسی شخص کے لیے کیا چیز غیر اطمینان بخش ہوسکتی ہے، اس کا پیمانہ مختلف افراد میں مختلف ہوسکتا ہے مگر یہ بات عالمگیر حقیقت ہے کہ ہر فرد شخصی طور پر کچھ حدود رکھتا ہے اور مسلسل اس سے آگے بڑھنے کی کوشش کرتا ہے۔یہاں ایسی ہی کچھ چیزوں کا ذکر ہے جو کسی فرد کے لیے غیر اطمینان بخش ہوسکتی ہیں مگر زندگی میں کامیابی بھی دلاتی ہیں۔

ہر چیز کے بارے میں سوالات
کچھ افراد کے لیے سب سے مشکل چیز ہر چیز کے بارے میں سوالات کرنا اور جواب حاصل کرنا ہے، تاہم اس کی کوشش کرنا آپ کو آگے بڑھنے میں مدد دیتا ہے۔

سو فیصد دیانت
لگ بھگ ہر شخص دیانتدار ہوسکتا ہے مگر سو فیصد دیانت بہت مشکل ہے اور زندگی کے لیے بہت زیادہ قیمتی بھی ہے۔ ماہرین کے مطابق اگر آپ صحیح معنوں میں دیانتدار ہیں تو آپ کے ہر لفظ سے حقیقی جذبات و احساسات کا اظہار ہوتا ہے اور ہر ایک آپ کی قدر کرتا ہے۔

علی الصبح اٹھنا
دنیا کے بیشتر کامیاب افراد میں ایک چیز مشترک ہوتی ہے اور وہ ہے جلد اٹھنا، سورج طلوع ہونے سے قبل اٹھنا پڑھنے اور کام کے لیے بہترین ماحول فراہم کرتا ہے، تاہم یہ بیشتر افراد کے لیے بہت بڑا چیلنج بھی ہوتا ہے۔

کچھ تخلیقی کرنا
ناکامی اور مسترد کیے جانے کا ڈر کسی کام سے دور رکھنے کے طاقتور عناصر ہوتے ہیں، مگر اپنے ذہن سے اس خوف کو نکال کر آپ بہت کچھ حیران کن بھی کرسکتے ہیں۔

بچت کا خیال رکھنا
اپنے خرچ کیے جانے والے ہر ایک پیسے کا حساب بہت مشکل کام ہے، تاہم اس کو اپنا کر آپ کچھ عرصے بعد خود حیران رہ جائیں گے کہ آپ کتنی زیادہ بچت کرنے لگے ہیں۔

غذا کا خیال
اپنی خوراک اور دن بھر میں ورزش کا خیال رکھنا بھی چیلنج سے کم نہیں، مگر یہ جسم کو صحت مند رکھنے میں مددگار ثابت ہوتا ہے۔

صرف غذائیت بخش غذا کا استعمال
منہ چلانے کی عادت ہر چیز کو کھانے پر مجبور کرتی ہے، لیکن صحت کے لیے فائدہ مند اور غذائیت بخش غذا کی عادت اپنالینا بھی بہت مشکل کام ہے، مگر یہ طبی اخراجات اور جسمانی کارکردگی میں کمی لانے سے بچاتا ہے۔

اجنبیوں سے بات چیت
کسی اجنبی سے بات کرنے کا خیال اکثر افراد کو دہشت زدہ یا پریشان کردیتا ہے، کیونکہ انہیں ڈر ہوتا ہے کہ وہ شخص انہیں مسترد نہ کردے، تاہم کسی اجنبی سے بات چیت بڑھانے کی عادت اعتماد کو بڑھاتی ہے جو زندگی کے لیے بہت ضروری ہے۔

فون کو جیب میں رکھ کر بھول جانا
دن بھر میں آپ کتنی بار فون کو چیک کرتے ہیں؟ کیا آپ اسے کہیں رکھ کر آرام سے بیٹھ سکتے ہیں؟ اگر ایسا کرسکیں تو آپ کے ذہن کو سکون ملے گا اور جب بیزار ہوں تو فون کو اٹھانے کی بجائے مطالعہ یا کسی اور عادت کو اپنائیں تاکہ زیادہ تخلیقی انسان بن سکیں۔

ایک وقت میں ایک چیز میں مہارت
ملٹی ٹاسکنگ اکثر شخصیت کے لیے تباہ کن ثابت ہوتی ہے، انسانی توجہ ایک وقت میں کئی چیزوں پر مرکوز نہیں ہوسکتی یا آپ کی کسی چیز میں دلچسپی بہت جلد ختم ہوجاتی ہے تو آپ اپنے اندر چھپی صلاحیتوں کو جان نہیں سکیں گے، لہٰذا کسی ایک چیز کا انتخاب کریں اور اس میں مہارت کے لیے جت جائیں، چاہے کتنا عرصہ بھی لگ جائے۔

مدد طلب کریں
کسی بھی فرد کے لیے مشکل کے وقت دوسروں سے مدد مانگنا کافی غیر اطمینان بخش کام ہوتا ہے، تاہم یہ عادت آہستہ آہستہ اس کی شخصیت کو تباہ کرنے لگتی ہے جبکہ اپنی بیماری کو ٹھیک کرنے کے لیے مدد طلب کرنے کی بجائے اسے چھپانا موت کا باعث بھی بن سکتا ہے۔

یہ بھی دیکھیں

پاکستان سمیت دنیا بھر میں آج عالمی آزادی صحافت کا دن منایا جا رہا ہے

کراچی (مانیٹرنگ ڈیسک ) ہرسال 3 مئی کو آزادی صحافت کا عالمی دن منایا جاتا ...