پیر , 1 مارچ 2021

پی آئی اے فلائیٹ سروس دوسرے روز بھی معطل

اسلام آباد، لاہور، کراچی: پاکستان انٹرنیشنل ایئر لائن (پی آئی اے) کی نجکاری کے خلاف ملازمین کے احتجاج کے باعث فلائیٹ سروس دوسرے روز بھی بند ہے۔

خیال رہے کہ گذشتہ روز ملازمین کے کراچی میں احتجاج کے دوران 2 افراد کی ہلاکت ہوئی تھی، ملازمین کی ہلاکت کے بعد ملک بھر میں ائیر پورٹس پر پی آئی اے کے عملے نے کام کرنا چھوڑ دیا تھا جس سے فلائیٹ سروس بند ہو گئی تھی۔

نجکاری کے خلاف پی آئی اے میں مزدور تنظیموں کے اتحاد جوائنٹ ایکشن کمیٹی کی ہڑتال کے باعث ملک بھر میں قومی ایئر لائن کا فضائی آپریشن بدستور معطل ہے۔

وفاقی دارالحکومت اسلام آباد سمیت کراچی ، لاہور ، فیصل آباد ، ملتان اور پشاور میں پی آئی اے کے ملازمین نجکاری کے خلاف پھر احتجاج کے لیے جمع ہوئے۔

انتظامیہ کی جانب سے اس موقع پر سیکیورٹی کے انتہائی سخت انتظامات کیے گئے، ائیر پورٹس سیکیورٹی فورس (اے ایس ایف) کے ساتھ ساتھ پولیس اور رینجرز بھی ہوائی اڈوں پر تعینات کی گئی، کیپٹل سٹی پولیس افسر (سی سی پی او) لاہور نے امین وینس نے سیکیورٹی کا جائزہ لینے کے لیے علامہ اقبال انٹرنیشنل ائیر پورٹ کا دورہ کیا۔

کراچی کے جناح انٹرنیشنل ائیر پورٹ پر پی آئی اے ہیڈ آفس کے سامنے پولیس اوررینجرز کی بھاری نفری کسی بھی ناخوشگوار واقعے سے نمٹنے کیلئے تعینات کی گئی۔

واٹرکینن کو بھی ائیرپورٹ کی حدود میں صبح سویرے پہنچا دیا گیا جبکہ اہلکاروں کے ہاتھوں میں لاٹھیاں اور ڈنڈے واضح نظر آ رہے تھے۔

پروازیں منسوخ

کراچی کے جناح انٹرنیشنل ائیر پورٹ، لاہور کے علامہ اقبال انٹرنیشنل ائیر پورٹ، اسلام آباد کے بینظیر بھٹو انٹرنیشنل ائیر پورٹ، پشاور کے باچاخان انٹرنیشنل ائیرپورٹ، کوئٹہ ائیر پورٹ، ملتان ایئر پورٹ اور فیصل آباد ایئر پورٹ سے سامنے آنے والی رپورٹس کے مطابق پی آئی اے کی 50 کے قریب بین الاقوامی اور قومی پروازیں منسوخ ہو چکی ہیں۔

ڈان نیوز کے مطابق منسوخ ہونے والی پروازوں میں دبئی، چین، جدہ اور دوحہ سے اسلام آباد جبکہ کوالالمپور، دبئی اور دوحہ سے پشاور آنے والی انٹرنیشنل پروازیں ہیں، لاہور میں بیرون ملک سے آنے والی 2 پروازیں اتریں جن میں میلان سے آنے والی پرواز PK-734 اور لندن سے آنے والی پرواز PK-758 شامل تھیں،اسی طرح اسلام آباد کے بینظیر بھٹو انٹرنشینل ائیرپورٹ پر پی آئی اے کا فلائٹ آپریشن معطل ہونے سے 27 پروازیں منسوخ ہوئیں، جبکہ کراچی سے اندرون اور بیرون ملک کے لیے 18 پروازیں منسوخ کرنی پڑیں۔

سرکاری ایئر لائن کے عملے کے احتجاج کے باعث ہوائی اڈوں پر نجی ایئر لائنز کے عملے سے کام لیا جا رہا ہے، بیرون ملک سے آنے والی پروازوں پر بھی انہی نے خدمات فراہم کیں۔

نجی ائیر لائنز کے کرائیوں میں اضافہ

سرکاری ایئر لائن پی آئی اے کی پروازوں کا شیڈول درہم برہم ہونے کے باعث نجی ائیر لائنز نے کرائے بڑھا دیئے۔

بعض ایئر لائنز نے کرائیوں میں 3 سے 4 گنا اضافہ کر دیا۔

31 جنوری تک 7000 روپے میں دستیاب ٹکٹ 21 ہزار روپے کا کر دیا گیا۔

ڈان نیوز کے مطابق ایک ائیر لائن نے تو مزید بکنگ سے ہی انکار کردیا، نجی ائیر لائنز کی جانب سے کرائیوں میں 300 فیصد تک اضافے اور بکنگ میں بندش کے باعث مسافر مزید مشکلات کا شکار ہو گئے ہیں۔

نجی ائیر لائنز کی جانب سے کرائیوں میں اضافے کی خبریں سامنے آنے کے باوجود بھی حکومت نے فوری طور پر اس حوالے سے کوئی ایکشن نہیں لیا۔

یہ بھی دیکھیں

فلسطین کی آزادی اور اسرائیل کا خاتمہ، پاکستانی قوم کی خواہش

حماس کے رہنما اسمٰعیل ہنیہ نے کہا ہے کہ پاکستان نے ہمیشہ فلسطین کی حمایت …