جمعرات , 4 مارچ 2021

مذہبی سکالر ڈاکٹر ذاکر نائیک پر پابندی عائد

ممبئی: مینگلورو کی پولیس نے دفعہ ایک سو چوالیس کے تحت ڈاکٹر ذاکر نائیک کے داخلے پر پابندی عائد کی۔ وہ اکتیس جنوری سے چھ جنوری تک شہر میں کسی عوامی میٹنگ اور تقریب میں شرکت نہیں کر سکتے۔ بھارتی میڈیا کے مطابق انتہا پسند ہندوؤں کے احتجاج کے خدشے کی وجہ سے یہ پابندی عائد کی گئی ہے۔ خیال رہے کہ ذاکر نائیک پیشہ کے لحاظ سے ڈاکٹر ہیں، تاہم انہوں نے 1991ء سے اسلام کی تبلیغ کو اپنی مکمل توجہ دینا شروع کر دی تھی۔ بہت سے لوگوں نے آپ کے ہاتھ اسلام قبول کیا۔ آپ بمبئی میں اسلامی تحقیق سنٹر کے صدر ہیں اور اسلامی چینل "پیس” کے نام سے چلا رہے ہیں۔ ذاکر نائیک حاضر جوابی اور مناظرہ میں دسترس رکھتے ہیں۔ ان کو عالمگیر شہرت عیسائی مناظر ولیم کیمپبل کے ساتھ مناظرہ سے حاصل ہوئی۔

یہ بھی دیکھیں

شام پر حملہ کرنے والے اسرائیلی میزائل تباہ

شامی فوج نے صوبہ حماہ کی فضا میں اسرائیل کے میزائلی حملوں کو ناکام بنا …