اتوار , 28 فروری 2021

قواعد کے برعکس کام کرنیوالی چارٹرڈ یونیورسٹیز کیخلاف کارروائی کا فیصلہ

16

لاہور: ہائیر ایجوکیشن کمیشن نے قواعد و ضوابط کے برعکس کام کرنیوالی ایک درجن سے زائد چارٹرڈ (نجی) یونیورسٹیز کیخلاف کارروائی کا فیصلہ کیا ہے۔
وزیراعظم کی ہدایت پر ایچ ای سی ملک بھر کی تمام (نجی) چارٹرڈ یونیورسٹیزکی ازسرنو انسپکشن کر رہی ہے جس کا مقصد کوالٹی ایجوکیشن کے فروغ کو یقینی بنانا ہے۔ اس ضمن میں انکشاف ہوا ہے کہ متعدد چارٹرڈ یونیورسٹیاں جن میں صوبائی دارالحکومت کی بعض یونیورسٹیز بھی شامل ہیں، جہاں ایچ ای سی کے مقررکردہ قواعدوضوابط کے برعکس کام جاری ہے جس پر فوری ایکشن لیتے ہوئے ایچ ای سی کے حکام نے فیصلہ کیا ہے کہ ناقص سہولیات رکھنے والی چارٹرڈ یونیورسٹیز کو مزید داخلوں سے روکا جائے گا جبکہ حد سے گزر جانے والی چارٹرڈ یونیورسٹیز کے این او سی منسوخ بھی کیے جائیں گے۔
واضح رہے کہ اس ضمن میں ایچ ای سی رپورٹ مرتب کر رہی ہے جس میں چارٹرڈ یونیورسٹیز میں پائی جانے والی خامیوں کی نشاندہی کی جائے گی اور ان کیخلاف طے شدہ ایکشن کے احامات جاری کیا جائے گا۔

یہ بھی دیکھیں

فلسطین کی آزادی اور اسرائیل کا خاتمہ، پاکستانی قوم کی خواہش

حماس کے رہنما اسمٰعیل ہنیہ نے کہا ہے کہ پاکستان نے ہمیشہ فلسطین کی حمایت …