منگل , 17 جنوری 2017

ایک سال میں پولٹری انڈسٹری کو 41 کروڑ ڈالر کا نقصان

کراچی(مانیٹرنگ ڈیسک ) مرغی کی قیمتوں میں مسلسل کمی کے باعث عوام خوش جبکہ پولٹری فارم مالکان کافی پریشان دیکھائی دیتے ہیں۔ آل پاکستان پولٹری فارم ایسوسی ایشن کے چیئرمین کے مطابق چند سال سے مرغی اور انڈوں کی پیداواری لاگت میں مسلسل اضافہ جبکہ قیمتوں میں کمی کا رجحان جاری ہے جس کے باعث صرف ایک سال کے دوران پولٹری انڈسٹری کو لگ بھگ 41 کروڑ ڈالر نقصان ہو چکا ہے۔ ان کا مزید کہنا تھا کہ اگر صورتحال میں کسی قسم کی تبدیلی نہیں ہوئی توجلد ہی پولٹری فارم بند ہونا شروع ہو جائیں گے۔اور گھروں کے چولہے بند ہو جائیں گے۔جس سے بیروزگاری میں بھی اضافہ ہوگا۔

یہ بھی دیکھیں

یوایس انٹرنیشنل ٹریڈ کمیشن نے پانچ چینی کمپنیوں کے بارے میں تحقیقات شروع کر دی

واشنگٹن (مانیٹرنگ ڈیسک )یوایس انٹرنیشنل ٹریڈ کمیشن نے پانچ چینی کمپنیوں کے بارے میں ٹریڈ ...

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے