جمعہ , 14 مئی 2021

امریکی کمپنی نے لوگوں کو بیمار کرنے والے ٹشو پیپرز ایجاد کر لئے

لاس اینجلس(مانیٹرنگ ڈیسک) ٹشو پیپرز عموماً صحت و صفائی کیلئے استعمال ہوتے ہیں لیکن ایک امریکی کمپنی نے آپ کو بیمار کرنے والے ٹشو پیپر بنائے ہیں جن میں چھینک پیدا کرنے اور زکام والے جراثیم شامل ہیں، ان ٹشو پیپرز کے ایک پیکٹ کی قیمت 80 امریکی ڈالر یعنی 11 ہزار پاکستانی روپے ہے۔

لاس اینجلس کی کمپنی کے مطابق ٹشو پیپر کا نام ’’وائیو‘‘ رکھا گیا ہے، اب تک ٹشو پیپر کے ایک ہزار پیکٹ فروخت ہو چکے ہیں، انہیں سونگھ کر آپ جلد یا بدیر زکام کی لپیٹ میں آ جائیں گے۔ کمپنی کے مطابق بعض لوگ نفسیاتی طور پر بیمار ہونا چاہتے ہیں اور خود کو لوگوں سے الگ تھلگ رکھنا چاہتے ہیں، اسی لئے یہ ٹشو پیپر بنایا گیا ہے اور جب بھی آپ کا بیمار ہونے کا موڈ ہے اس ٹشو پیپر سے ناک صاف کرتے ہوئے گہرے سانس لیں اور چھینک آنے کا انتظار کریں اگر لگاتار چھینکیں آنے لگیں تو مبارک ہو کہ آپ بیمار ہونے لگے ہیں۔

کمپنی کے سربراہ کا موقف ہے کہ اب بھی یہ ٹشو پیپر صحت مند شے ہے کیونکہ یہ سردیوں یا فلو کے موسم میں آپ کو پہلے سے بیمار کرتا ہے۔ اس طرح جسم کا مدافعتی نظام بیدار ہوتا ہے اور آپ بعد میں اس مرض کی لپیٹ میں آنے سے بچ جاتے ہیں۔

ڈاکٹروں نے اس پر شدید تنقید کرتے ہوئے کہا ہے کہ ٹشو میں زکام کی ایک قسم کے جراثیم بھرے ہیں جس سے آپ بیمار ہو کر صرف ایک جراثیم سے مدافعت پاتے ہیں لیکن کولڈ وائرس کی 200 مختلف اقسام ہیں جنہیں رائنو وائرس کہا جاتا ہے۔ اس طرح ایک جراثیم سے مدافعت پانے سے آپ بقیہ جراثیم سے محفوظ نہیں رہ سکیں گے۔ کمپنی نے 10 لوگوں پر اپنے ٹشو پیپرز کا تجربہ بھی کیا اور دعوی ٰ کیاہے کہ نتائج 100رہے اگر ٹشو سونگھنے سے لوگ بیمار نہ ہوتے تو اس کی تیاری روک دی جاتی۔

یہ بھی دیکھیں

نشے کے عادی شخص نے نشہ نہ ملنے پر چھری نگل لی

بھارت میں نشے کے عادی شخص نے نشہ نہ ملنے پر باورچی خانے میں استعمال …