اتوار , 20 جون 2021

جنگی عزائم: بھارت اسلحے کا دوسرا بڑا خریدار بن گیا

نئی دہلی(مانیٹرنگ ڈیسک) خطے میں چودہراہٹ کا خواب اور وسعت پسندانہ عزائم رکھنے والا بھارت اسلحے کا دوسرا بڑا خریدار بن گیا۔ دنیا بھر میں فروخت ہونیوالے کل اسلحے کا 9.5 فیصد بھارت خرید لیتا ہے، بھارت کے پاس 130 سے 140 ایٹمی ہتھیار ہیں۔گلوبل تھنک ٹینک سٹاک ہوم انٹر نیشنل پیس ریسرچ اسنٹی ٹیوٹ کی رپورٹ کے مطابق دنیا بھر میں فروخت ہونیوالے کل اسلحے کا 9.5 فیصد بھارت خرید لیتا ہے، بھارت اس کے علاوہ نومبر میں فرانس سے 59 ارب ڈالر کے رافیل جنگی طیارے بھی خریدے گا جبکہ روس سے 40 ارب ڈالر مالیت کا ایس 400 میزائل سسٹم بھی لے گا۔ بھارت 58 فیصد اسلحہ روس، 15 فیصد اسرائیل اور 12 فیصد امریکا سے خریدتا ہے۔

سٹاک ہوم انٹرنیشنل پیس ریسرچ انسٹی ٹیوٹ کی ایک رپورٹ کے مطابق دنیا کی 9 جوہری طاقتوں کے ایٹمی ہتھیاروں کی مجموعی تعداد 16 ہزار 300 ہے، جن میں سے تقریباً 4 ہزار ہتھیار حملے کے لئے تیار حالت میں ہیں۔ 9 ایٹمی طاقتوں میں امریکا، روس، چین، پاکستان، بھارت، برطانیہ، فرانس، اسرائیل اور شمالی کوریا شامل ہیں۔ بھارت کے ایٹمی ہتھیاروں کی تعداد 130 سے 140 ہے۔ سکیورٹی کے بڑھتے ہوئے خطرات کے باوجود پاکستان کے دفاعی اخراجات خطے کے دیگر ممالک کی نسبت سب سے کم ہیں۔

یہ بھی دیکھیں

عراق، روضہ کاظمین کے قریب دھماکہ، تین افراد جاں بحق

بغداد: عراق کے دارالحکومت بغداد کے نواحی علاقے کاظمین میں ہونے والے دھماکے میں کم …