اتوار , 20 جون 2021

نیوزی لینڈ مساجد حملے میں شہید تمام افراد کی شناخت مکمل

ویلنگٹن(مانیٹرنگ ڈیسک) نیوزی لینڈ کی مساجد پر گزشتہ جمعے ہونے والے دہشت گرد حملے میں شہید ہونے والے تمام 50 افراد کی شناخت کرلی گئی۔نیوزی لینڈ میں پاکستانی ہائی کمشنر عبدالمالک کے مطابق کرائسٹ چرچ سانحے میں شہید ہونے والے 9 پاکستانیوں میں سے 7 کی میتیں ورثاء کے حوالے کردی گئیں ہیں۔مسجد پر حملہ آور کو روکنے کی کوشش میں شہید ہونے والے نعیم راشد اور ان کے بیٹے طلحہ راشد کی میتیں بھی آج ورثاء کے سپرد کردی جائیں گی۔

مساجد حملے میں شہید کراچی کے سید اریب احمد کی نماز جنازہ کرائسٹ چرچ میں ادا کر دی گئی جب کہ ان کی میت آئندہ ہفتے پاکستان لائی جائے گی۔مساجد میں فائرنگ سے شہید 9 میں سے 8 پاکستانی شہداء کی تدفین نیوزی لینڈ میں ہی ہوگی۔

مسجد کی بحالی کا کام تیزی سے جاری
دوسری جانب کرائسٹ چرچ میں دہشت گردی کا شکار النور مسجد کی بحالی کا کام تیزی سے جاری ہے جہاں کل نماز جمعہ کی ادائیگی ہوگی۔بڑھئی، باغبان، قالین بچھانے والے اور دیگر مزدوروں کی بڑی تعداد مسجد کی بحالی کے کام میں شریک ہے جب کہ نیوزی لینڈ حکام کے مطابق مسجد کی بحالی کا کام مکمل نہ ہوسکا تو نماز جمعہ سڑک پر ادا کی جائے گی۔

ادھر پولیس اور قانون نافذ کرنے والے اداروں نے النور مسجد سے حملے کے تمام ممکنہ شواہد اور ثبوت حاصل کرلیے ہیں۔مسلم کمیونٹی سے اظہار یکجہتی کے لیے نیوزی لینڈ میں جمعے کو سرکاری میڈیا پر اذان بھی نشر ہوگی اور 2 منٹ کی خاموشی بھی اختیار کی جائے گی۔

یاد رہے کہ نیوزی لینڈ کے شہر کرائسٹ چرچ میں گزشتہ جمعے مساجد پر حملے میں 50 افراد جاں بحق اور کئی زخمی ہوئے تھے،اس واقعے کی پاکستان سمیت دنیا بھر سے شدید مذمت کی گئی ہے جب کہ نیوزی لینڈ کی وزیراعظم نے حملے کو دہشت گردی قرار دیا ہے۔

یہ بھی دیکھیں

کابل میں پھر دھماکے، آٹھ افراد جاں بحق، شیعہ ہزارہ نشانے پر

کابل: افغانستان کے دارالحکومت میں جمعرات کو ہونے والے دو الگ الگ بم دھماکوں میں …