ہفتہ , 27 نومبر 2021

زیر آب حیرت انگیز دنیا

انڈر واٹر فوٹوگرافر آف دی ایئر میں سمندروں، جھیلوں اور دریاؤں میں زیر آب لی گئی تصاویر کا جشن منایا جاتا ہے۔

دنیا کے 70 ممالک سے اس مقابلے کے 13 زمروں میں شرکت کے لیے 5500 سے زیادہ تصاویر شامل کی گئی تھیں۔یہاں چند تصاویر پیش کی جا رہی ہیں جنھیں سنہ 2020 کے مقابلے میں فاتح قرار دیا گیا ہے:

انڈر واٹر فوٹوگرافر آف دی ایئر
Image captionگریگ لیکیور نے سنہ 2020 کے انڈرواٹر فوٹوگرافر آف دی ایئر کا ایوارڈ ‘فروزن موبائل ہوم’ نامی تصویر کے لیے حاصل کیا ہے۔ اس میں اینٹارکٹکا یا قطب جنوبی میں سیل مچھلیوں کو برف کے تودے کے ساتھ دیکھا جا سکتا ہے
Presentational white space
نونہال شارک
Image captionآسٹریلیا کی انیتا کینرتھ نے ‘اپ اینڈ کمنگ’ انڈر واٹر فوٹوگرافر آف دی ایئر کا ایوارڈ شارک نرسری کی تصویر کے لیے حاصل کیا ہے۔ اس تصویر میں بہاماس میں مینگروو کے درخت کے گرد نونہال شارک کو دکھایا گیا ہے۔
Presentational white space
جال میں ٹیونا
Image captionاٹلی کے پاسکوالو وسالو نے سال کے میرین کنزرویشن فوٹوگرافر آف دی ایئر کا ایوارڈ اپنی تصویر جس کا عنوان ‘لاسٹ ڈان’ یعنی آخری صبح ہے کے لیے حاصل کیا ہے۔ اس میں نیپلز کے ساحل پر ایک ٹُونا مچھلی کو جال سے کشتی کی طرف کھینچا جا رہا ہے۔
Presentational white space
ریبٹ فش
Image captionانگلینڈ کی کاؤنٹی ڈیون کے نک مور نے ‘برٹش انڈرواٹر فوٹوگرافر آف دی ایئر’ کا ایوارڈ انڈونیشیا میں ریبٹ فش زوم بلر کی تصویر سے حاصل کیا ہے۔
Presentational white space
گھڑ مچلی
Image captionلندن کے جنوب مغربی علاقے ومبلڈن کے نور ٹکر نے ‘موسٹ پرومسنگ برٹش انڈرواٹر فوٹوگرافر’ کا اعزاز حاصل کیا ہے۔ انھیں یہ ایوارڈ ‘کموشن ان دی اوشن’ نامی تصویر پر ملا ہے جس میں انھوں نے گھوڑے کی شکل والی مچھلی کی ایک تصویر لی ہے۔
Presentational white space
فلاویا ایبرہارڈ
Image captionبرطانوی فوٹوگرافر زینا ہولووے کو بلیک اینڈ وائٹ زمرے میں ایوارڈ ملا ہے۔ انھوں نے برازیل کی فری ڈائیور اور قدرتی وسائل کے تحفظ کی حامی فلاویا ایبرہارڈ کی یہ تصویر میکسیکو کے جزیرہ نما یوکینٹن میں لی ہے۔
Presentational white space
جہاز
Image captionجنوبی کلیفورنیا کی رینی کیپوزولا نے ریک یعنی ’تباہ‘ والے زمرے میں ایوارڈ حاصل کیا ہے۔ انھوں نے غرقاب ہونے والے بحری جہاز جارجیوز کی تصویر سعودی عرب کے ساحل پر لی ہے جو کہ سپلٹ شاٹ ہے۔ یہ جہاز 1978 کے آس پاس چلا کرتا تھا اور اب اسے مصنوعی چٹان کے طور پر دیکھا جاتا ہے۔
Presentational white space
جھینگے
Image captionکیگو کاوامارو نے میکرو زمرے میں ایوارڈ حاصل کیا ہے۔ اس تصویر میں جاپان میں پائے جانے والے ایک سینگ والے جھینگوں کو دیکھا جا سکتا ہے۔
Presentational white space
شائق البحر
Image captionٹریور ریس نے برٹش واٹرز وائڈ اینگل زمرے میں ایوارڈ حاصل کیا ہے۔ انھیں یہ ایوارڈ شیٹ لینڈ میں لوک ڈچ کے مقام پر سمندری پھول شائق البحر کے کھلنے کی تصویر لینے کے لیے دیا گیا ہے۔
Presentational white space
کیکڑا
Image captionشین کینا کو کنزرویشن کے زمرے میں ایوارڈ ملا ہے۔ انھوں نے پیلیلیو آئیلینڈ میں ایک کیکڑے کی تصویر لی ہے جس نے ایک ٹین کے ڈبے کو اپنا عارضی مسکن بنا رکھا ہے۔
Presentational white space

یہ بھی دیکھیں

لبنان کو ایرانی تیل کی ترسیل کا سلسلہ جاری

تہران: ایرانی ایندھن کا حامل ایک اور کاروان شام کے راستے لبنان میں داخل ہو …