ہفتہ , 27 نومبر 2021

بھارت میں حفاظتی ایپ پر پاکستانی ٹرین کی تصویر

بھارتی ریاست گجرات میں ریلوے پولیس نے حال ہی میں متعارف کروائی گئی ایپلی کیشن سے سبز ٹرین انجن کی تصویر کو اس وقت ہٹادیا جب یہ نشاندہی کی گئی کہ یہ بظاہیر پاکستانی ٹرین لگ رہی ہے۔بھارتی نشریاتی ادارے این ڈی ٹی وی نے رپورٹ کیا کہ کرائم اور ریلویز کے ڈپٹی انسپکٹر جنرل پولیس گوتم پرمار کا کہنا تھا کہ ‘ایپلی کیشن کو مزید متاثر کن بنانے کے لیے ایپ ڈیولپر نے ٹرینز کی کچھ تصاویر شامل کی تھیں، اسی عمل کے دوران انہوں نے نادانستہ طور پر ایک تصویر پاکستانی ٹرین کی استعمال کرلی’۔انہوں نے مزید کہا کہ ‘اس بارے میں علم ہوتے ہی ہم نے ڈیولپر سے اسے ہٹانے کا کہا اور یہ ایک غیرارادی غلطی تھی’۔رپورٹ کے مطابق یہ ایپ 29 فروری کو گجرات کے وزیر مملکت برائے داخلہ پردیش سن جڈیجا کی طرف سے متعارف کروائی گئی تھی۔

اس ایپلی کیشن کا مقصد ٹرین صارفین کو کسی بھی ایمرجنسی کی صورت میں گجرات کی حکومتی ریلوے پولیس (جی آر پی) کی مدد حاصل کرنے کے لیے ایک پورٹل فراہم کرنا تھا۔یہ ایپ صارف کو چھیڑ چھاڑ، کمپارٹمنٹ میں غیرمجاز شخص کے داخل ہونے، غیرقانونی تجارت اور لاپتہ بچوں کی اطلاع کے معاملے میں پولیس کی مدد طلب کرنے کا آپشن بھی فراہم کرتی ہے۔

 

 

یہ بھی دیکھیں

لبنان کو ایرانی تیل کی ترسیل کا سلسلہ جاری

تہران: ایرانی ایندھن کا حامل ایک اور کاروان شام کے راستے لبنان میں داخل ہو …