منگل , 30 نومبر 2021

پاکستان کی معاشی ترقی کی شرح نمو 2.5 فیصد تک رہنے کا امکان، موڈیز

کراچی: عالمی کریڈٹ ریٹنگ ایجنسی موڈیز نے پاکستان کی معاشی ترقی کی شرح نمو 2 سے ڈھائی فیصد تک رہنے کا امکان ظاہر کردیا۔عالمی کریڈٹ ریٹنگ ایجنسی موڈیز نے اپنی رپورٹ میں کہا ہے کہ رواں برس پاکستان کی معاشی ترقی کی شرح نمو 2 سے ڈھائی فیصد تک رہنے کا امکان ہے۔ شرح سود میں کمی سے نجی شعبے میں قرضوں کی فراہمی میں اضافہ ہوگا اور قرض داروں کی قرضوں کی واپسی کی صلاحیت کو بہتر بنانے میں مدد ملے گی۔

موڈیز نے اپنی رپورٹ میں کہا ہے کہ شرح سود میں کمی سے بینکوں کے مارجن اور آمدن متاثر ہوگی، اس کے علاوہ بینکوں کے اثاثہ جات کے معیار پر بھی دباؤ میں اضافہ ہوگا تاہم بینکوں کے لیے کیپیٹل کنزرویشن بفر ختم ہونے سے بینکوں کی قرض فراہمی کی صلاحیت بہتر ہوگی۔عالمی کریڈٹ ریٹنگ ایجنسی کا کہنا ہے کہ کورونا وبا کے پیش نظر سپلائی چین کے مسائل اور برآمدی آرڈرز کی منسوخی سے ٹیکسٹائل کا شعبہ زیادہ متاثر ہونے کا خدشہ ہے، اس کے علاوہ نقل وحرکت پر پابندی کے باعث پاکستان میں خدمات کا شعبہ بھی متاثر ہونے کا خدشہ ہے۔واضح رہے کہ موڈیز نے اس سے قبل کرونا وائرس کے معاشی اثرات کی وجہ سے پاکستان کی معاشی ترقی کی شرح نمو 2.9 فیصد رہنے کی توقع ظاہر کی تھی۔

 

 

یہ بھی دیکھیں

ایران ایک اچھے معاہدے تک پہنچنے کی کوشش کر رہا ہے: ایرانی وزیر خارجہ

تہران: اسلامی جمہوریہ ایران کے وزیر خارجہ امیر عبداللہیانن نے اقوام متحدہ کے سکریٹری جنرل …