ہفتہ , 22 جنوری 2022

کورونا وائرس: برطانوی مسلمانوں کو حج کی بکنگ معطل کروانے کی ہدایت

لندن:حج کی سعادت حاصل کرنے کی منصوبہ بندی کرنے والے برطانوی مسلمانوں کو ہدایت کی گئی ہے کہ وہ کوویڈ۔19وبا کے پیش نظر اپنی بکنگ معطل کرا دیں۔ مسلم کونسل آف برٹین (ایم سی بی) نے کہا ہے کہ سعودی عرب میں مکہ اور مدینہ کے مقدس شہروں کا سفر کرنے کیلئے پر امید زائرین انتظار کریں اور دیکھیں کہ حالات کیا سمت اختیار کرتے ہیں۔ توقع ہے کہ دنیا بھر سے دو ملین افراد اس فریضہ کی ادائیگی کریں گے، جس کا آغاز جولائی کے آخر میں ہوگا۔ ایم سی بی کا بیان سعودی حکام کی اس ہدایت کے بعد سامنے آیا ہے کہ لوگ سلطنت کے سفر کیلئے معاہدوں پر دستخط سے رک جائیں۔

ایم سی بی کے سیکرٹری جنرل ہارون خان نے کہا ہے کہ حج کی ادائیگی مسلمانوں کی زندگی میں سب سے بڑا واقعہ ہوتا ہے اور اس امر میں کوئی شبہ نہیں کہ بہت سے لوگ اس سال یہ فریضہ ادا کرنے کی خواہش رکھتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ایسے وقت، جس کی ماضی میں کوئی مثال نہیں ملتی، پبلک ہیلتھ کو سب سے مقدم رکھا جانا چاہئے، ایسی جگہ، جہاں دنیا بھر سے لاکھوں افراد شانہ بشانہ موجودہوتے ہیں، یہ بات قابل فہم ہے کہ ہمیں احتیاطی طور پر انتظار کر کے دیکھنا چاہئے کہ حالات کیا رخ اختیار کرتے ہیں۔ مسٹر خان نے برطانوی حج ٹور آپریٹرز پر زور دیا کہ وہ موجودہ کسٹمرز کو یہ یقین دہانی کرائیں کہ ان کی بکنگز کو سول ایوی ایشن اتھارٹی کی ایٹول سکیم کے تحت مالیاتی تحفظ حاصل ہے۔

ایک بیان میں انہوں نے ٹور آپریٹرز کو، جنہیں مالی نقصان کا سامنا ہے، یہ مشورہ دیا کہ وہ سپورٹ کیلئے حکومت سے رابطہ کریں۔ واضح رہے کہ سعودی عرب نے فروری میں کوویڈ۔19 کی وبا کے پیش نظر مکہ اور مدینہ کو غیر ملکیوں کیلئے بند کر دیا تھا۔ ملک بھر میں 1500 سے زائد تصدیق شدہ کیسز سامنے آنے کے پیش نظر اس کے بعد سے ہی ملک بھر میں رات کا کرفیو نافذ ہے اور تمام اندرونی و بیرونی پروازیں معطل کر دی گئی ہیں۔ سلطنت میں وائرس سے اب تک دس اموات ہو چکی ہیں۔ ایک روز قبل سلطنت کے وزیر حج صالح بن طاہر بنتن نے سرکاری ٹیلی ویژن سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ سعودی عرب نے تمام مسلمانوں اور قوموں کی سلامتی یقینی بنانے کی تیاری کر لی ہے۔

یہ بھی دیکھیں

ترکی اور اسرائیل کے وزرائے خارجہ کے مابین باضابطہ گفتگو

انقرہ: ترکی اور اسرائیل کے وزرائے خارجہ کے مابین ٹیلی فونی گفتگو ہوئی ہے۔ ترکی …