جمعہ , 22 اکتوبر 2021

ترکی کا فوجی طیارہ گر کر تباہ؛ سات اہلکار ہلاک

انقرہ:  ترکی کے صوبے وین میں دشمن کی موجودگی کی کھوج میں مصروف طیارہ پہاڑی علاقے میں گر کر تباہ ہوگیا ۔ ابلاغ نیوز نے عالمی عالمی ذرائع ابلاغ کے حوالے سے بتایا ہے کہ ترکی کے صوبے وین میں دشمن کی موجودگی کی کھوج میں مصروف طیارہ پہاڑی علاقے میں گر کر تباہ ہو گیا جس کے نتیجے میں 7 سیکیورٹی اہلکار ہلاک گئے۔ ذرائع کے مطابق اس حادثے کی وزارت داخلہ نے بھی تصدیق کر دی ہے اور سلیمان سوئیلو نے بتایا کہ "ہماری ٹیم نے ہمیں بتایا ہے کہ ہمارے  سات ہیروز مارے گئے ہیں جن میں دو پائلٹ شامل ہیں”۔

یہ بھی پڑھیں:شہید جنرل قاسم سلیمانی کے پاس امریکا اور داعش کے درمیان خفیہ رابطوں کی ویڈیو فوٹیجز اور آڈیو کپلز تھے؛ایرانی عہدیدار کا انکشاف

سلیمان سوئیلو  کا مزید کہنا تھا کہ مائونٹ آرٹوس پر 2200 میٹر کی بلندی پر طیارہ تباہ ہوا، طیارے نے وین فیرٹ میلین ایئرپورٹ سے اڑان بھری تھی۔ 2015 ماڈل کا طیارہ پیر سے وین اور ہکی صوبوں میں جاسوسی اور نگرانی کے مشن پر تھا، پائلٹ نے آخری دفعہ اس وقت کنٹرول ٹاور سے رابطہ کیا جب اڑان بھرے تقریباً  چار گھنٹے ہوچکے تھے اور وہ بسکیلہ ضلع کی حدود میں تھا، اس رابطے کے 13 منٹ بعد ریڈار سے رابطہ بالکل ہی ختم ہوگیا اور وہ خود بھی بعد میں اس علاقے میں پہنچ گئے جہاں طیارہ تباہ ہوا۔ ابتدائی طور پر طیارے کی تباہی کی وجہ معلوم نہیں ہوسکی۔

یہ بھی دیکھیں

لبنان کو ایرانی تیل کی ترسیل کا سلسلہ جاری

تہران: ایرانی ایندھن کا حامل ایک اور کاروان شام کے راستے لبنان میں داخل ہو …