ہفتہ , 16 اکتوبر 2021

امریکا شام میں دہشتگرد گروہوں کی ٹریننگ میں مصروف ہے؛ روس کا انکشاف

روس نے کہا ہے کہ امریکی فوج شام کی التنف فوجی اڈے میں دہشتگرد گروہوں کو ٹریننگ دے رہی ہے۔ابلاغ نیوز نے عالمی ذرائع ابلاغ کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ روس کی وزارت خارجہ نے ایک رپورٹ جاری کی ہے جس میں اس بات کی نشاندہی کی گئی ہے کہ امریکہ جنوبی شام کے التنف علاقے میں دہشتگرد گروہوں کو ٹریننگ دے رہا ہے۔التنف عراق اور اردن کی سرحد کے قریب ایک علاقہ ہے۔

اس سے قبل شامی مبصرین و ماہرین نے بھی التنف چھاؤنی میں داعش دہشتگرد گروہ کے عناصر کی ٹریننگ کی خبر دی تھی۔ شامی ماہرین کا کہنا ہے کہ امریکہ، یہاں قابض رہنے کے لئے داعش کو بہانہ بنا رہا ہے اور اگر داعش گروہ ختم بھی ہو جاتا ہے تو وہ اسے پھر دوبارہ تشکیل دے  دے گا۔

شام کا بحران سن دوہزار گیارہ میں سعودی عرب، امریکہ اور ان کے اتحادیوں کے حمایت یافتہ دہشتگردوں کے ذریعے شروع کیا گیا۔ شام میں بحران کھڑا کرنے کا مقصد علاقے میں طاقت کے توازن کو صیہونی حکومت کے حق میں تبدیل کرنا تھا۔شام استقامتی محاذ کا ایک اصلی رکن ہے اور علاقے میں امریکی صیہونی سعودی محاذ کے اقدامات اور سازشوں کا مقابلہ کرنے میں بنیادی کردار کا حامل ہے۔

یہ بھی دیکھیں

ایرانی و ہندوستانی وزرائے خارجہ کی ملاقات، باہمی تعاون کے مزید فروغ کے لئے پر عزم

نیویارک: اسلامی جمہوریہ ایران اور ہندوستان کے وزرائے خارجہ کے درمیان اقوام متحدہ کی جنرل …