اتوار , 24 اکتوبر 2021

امریکی وزیر خارجہ کی افغان طالبان اور افغان حکومت سے الگ الگ ملاقات

امریکی وزير خارجہ مائیک پمپئو نےقطر کے دارالحکومت دوحہ میں طالبان اور افغان حکومت کے نمائندوں سے علیحدہ علیحدہ ملاقات اور گفتگو کی۔

 ابلاغ نیوز نے یورونیوز کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ امریکی وزير خارجہ مائیک پمپئو نےقطر کے دارالحکومت دوحہ میں طالبان دہشت گردوں اور افغان حکومت کے نمائندوں سے علیحدہ علیحدہ ملاقات اور گفتگو کی۔

اطلاعات کے مطابق قطر میں امریکہ کی سرپرستی میں طالبان اور افغان حکومت کے درمیان ہونے والے معاہدے میں عدم پیشرفت اور افغان میں تشدد اور دہشت گردانہ کارروائیوں کا سلسلہ جاری ہے۔ امریکہ اور طالبان کے درمیان ہونے والے معاہدے کی بنا پر امریکہ 2021 تک اپنی فوج کو افغانستان سے مکمل طور پر خارج کرنے کا پابند ہے۔ ذرائع کے مطابق افغانستان میں ہونے والی دہشت گردی کے پیچھے امریکہ کا ہاتھ ہے۔ طالبان دہشت گردوں کی داغ بیل امریکہ اور سعودی عرب نے مل کر ڈالی تھی اور اس میں انھیں پاکستان کا تعاون بھی حاصل تھا ، پاکستان بھی اب افغانستان میں قیام امن کے سلسلے میں تلاش و کوشش کررہا ہے۔

یہ بھی دیکھیں

لبنان کو ایرانی تیل کی ترسیل کا سلسلہ جاری

تہران: ایرانی ایندھن کا حامل ایک اور کاروان شام کے راستے لبنان میں داخل ہو …