جمعہ , 3 دسمبر 2021
تازہ ترین

دو ہزار افریقی یہودیوں کو مقبوضہ فلسیطن میں آباد کرنے کا فیصلہ

افریقی ملک ایتھوپیا سے دو ہزار یہودی اسرائیل پہنچیں گے جن کو غیر قانونی طورپر مقبوضہ فلسطین کی سرزمین پر صیہونی آبادیوں میں آباد کیا جائے گا۔

صیہونی ریاست کے عبرانی ٹی وی چینل ’7‘ کی رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ ’وزٹ اسرائیل‘ کے عنوان سے شروع کردہ منصوبے کے تحت افریقی ملک ایتھوپیا سے جلد دو ہزار یہودیوں کو صیہونی ریاست میں لایا جائے گا جنہیں گذشتہ کچھ عشروں کے دوران اسرائیل میں پر تعیش زندگی کے خواب دیکھا کر اسرائیل میں آباد ہونے کیلئے آمادہ کیا گیا ہے ۔

عبرانی ٹی وی چینل کی رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ ایتھوپیا میں کئی اسرائیلی ادارے کام کر رہے ہیں جو یہودیوں کو صہیونی ریاست میں آنے کی ترغیب دیتے ہیں۔ ان تنظیموں اور اداروں میں اسرائیلی وزارت خارجہ اور داخلہ کے مندوبین، ایمیگریشن حکام اور اسرائیل میں زیادہ سے زیادہ آباد کاری کے لیے کام کرنے والے گروپوں کے نمائندے بھی شامل ہوتے ہیں۔

عبرانی ٹی وی رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ حکومت نے رواں سال اکتوبر میں ایتھوپیا سے دو ہزار یہودیوں کو لانے اور انہیں مقبوضہ فلسطینی علاقوں میں آباد کرنے کا فیصلہ کیا تھا۔

یہ بھی دیکھیں

امریکی سیکریٹری دفاع کی ہائپرسونک ہتھیاروں کیلئے چین کی کوششوں پر تنقید

سیول: امریکی سیکریٹری دفاع لائیڈ آسٹن نے کہا ہے کہ چین کی جانب سے ہائپر …