جمعہ , 14 مئی 2021

بھارتی بحریہ کے حادثے کا شکار طیارے کے قریب سے انسانی باقیات برآمد

بھارتی بحریہ کا کہنا ہے کہ اسے 10 روز قبل بحیرہ عرب کے اوپر حادثے کا شکار ہوئے مگ 29 کے لڑاکا طیارہ کے ملبے کے قریب انسانی باقیات ملے ہیں جنہیں ڈی این اے کے لیے بھیجا گیا ہے۔

بھارتی میڈیا کے مطابق بحریہ کا مگ 29 کا ٹرینی طیارہ 26 نومبر کو بحیرہ عرب میں گوا کے نزدیک حادثے کا شکار ہوگیا تھا، طیارے میں سوار ایک پائلٹ کو بحفاظت بچا لیا گیا تھا۔

طیارے میں سوار دوسرا پائلٹ کمانڈر نشانت حادثے کے بعد لاپتہ تھا، بحریہ نے اسی روز اس کا پتہ لگانے کے لیے تلاش مہم کا آغاز کیا تھا۔

بھارتی بحریہ کے مطابق 11 روز کی مستقل مہم کے بعد آخر کار آج بحیرہ عرب میں گوا سے 30 سمندری میل کے فاصلے پر بحیرہ میں تقریباً 70 میٹر نیچے طیارے کے ملبے کے پاس ایک انسانی جسم کی باقیات پائی گئی ہیں جنہیں ڈی این اے کے لیے بھیجا گیا ہے۔

ڈی این اے ٹیسٹ سے حادثے میں لاپتہ پائلٹ کی شناخت کی جا سکے گی۔

بھارتی بحریہ نے پائلٹ کی تلاش کے لیے وسیع مہم کا آغاز کیا تھا، اس میں جنگی جہازوں، آبدوزوں، ہیلی کاپٹروں اور جاسوسی طیاروں کی مدد لی گئی تھی۔

اس دوران بحریہ کے غوطہ خوروں نے بھی تلاش کا کام جاری رکھا، طیاروں اور ہیلی کاپٹروں نے تلاشی مہم کے دوران 270 گھنٹے سے زائد وقت تک اڑان بھری۔

یہ بھی دیکھیں

ایران و چین معاہدے پر امریکہ چراغ پا

امریکی صدر نے ایران اور چین کے 25 سالہ معاہدے پر سخت تشویش کا اظہار …