ہفتہ , 16 اکتوبر 2021

عدالت کا مکہ کرین حادثے کے ملزمان کو بری کرنے کا حکم جاری

اب سے پانچ برس قبل مکۂ مکرمہ میں پیش آنے والے 108 افراد کے ہلاکت خيز واقعے کے ملزمان کو بری کر دیا گیا۔

مزید اطلاعات کے مطابق مکہ مکرمہ کی عدالت نے سانحہ حرم کرین کے حوالے تازہ فیصلے میں 13 ملزمان کو الزامات سے بری کر دیا۔

بری کیے جانے کے فیصلے میں ’بن لادن‘ گروپ بھی شامل ہے۔ فیصلے میں کہا گیا ہے کہ ملزمان پر فرد جرم ثابت نہیں ہوئی۔ کیس اپیل کورٹ کو ارسال کر دیا گیا جہاں اس پر مزید بحث کرکے فیصلہ صادر کیا جائے گا۔

عربی روزنامے’عکاظ‘ کے مطابق کیس میں محکمہ موسمیات کی رپورٹ کو بنیاد بناتے ہوئے کہا گیا تھا کہ ’جس روز سانحہ ہوا محکمہ کی جانب سے ایسی کوئی اطلاع نہیں تھی کہ طوفانی ہوائیں چلیں گی، نہ ہی محکمہ کی جانب سے کسی قسم کی احتیاطی تدابیر اختیار کرنے کے حوالے سے انتباہ دیا گیا تھا۔

یاد رہے 11 ستمبر 2015 کو جمعے کی شام مسجد الحرام کے حدود میں کرین گرنے کا واقعہ پیش آیا تھا جس میں 108 سے زائد افراد جاں بحق اور 238 زخمی ہو گئے تھے۔

یہ بھی دیکھیں

ایرانی و ہندوستانی وزرائے خارجہ کی ملاقات، باہمی تعاون کے مزید فروغ کے لئے پر عزم

نیویارک: اسلامی جمہوریہ ایران اور ہندوستان کے وزرائے خارجہ کے درمیان اقوام متحدہ کی جنرل …